مہاراشٹرمیں سیاسی او بی سی ریزرویشن بحال ٗعوام میں خوشی کاماحول

658

نئی دہلی:20۔ جولائی(ایجنسیز) ریاست کے بلدیاتی اداروں میں او بی سی کمیونٹی کے لیے سیاسی ریزرویشن کی بحالی کی راہ ہموار ہو گئی ہے۔ ریاستی حکومت کی طرف سے پیش کی گئی بنتھیا کمیشن کی رپورٹ کو قبول کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے او بی سی ریزرویشن کے ساتھ بلدیاتی اداروں کے انتخابات کے انعقاد کو منظوری دے دی ہے۔

اس سے ریاست میں او بی سی برادری کو بڑی راحت ملی۔ مہا وکاس اگھاڑی حکومت کے دوران عدالت نے او بی سی ریزرویشن پر روک لگا دی تھی۔ اس کے بعد ٹھاکرے حکومت نے اس ریزرویشن کو بحال کرنے کے لیے قانونی جنگ لڑی تھی۔ تاہم وہ اس میں کامیاب نہیں ہو سکے۔ تاہم، شندے-فڑنویس حکومت کے چند دنوں کے اندر، سپریم کورٹ نے مقامی اداروں میں او بی سی ریزرویشن کو ہری جھنڈی دے دی ہے۔

الیکشن کمیشن نے چند روز قبل بعض بلدیاتی انتخابات کے شیڈول کا اعلان کیا تھا۔ یہ انتخابات اگست کے مہینے میں ہونے تھے۔ تاہم، ریاستی الیکشن کمیشن نے ایک بڑا فیصلہ لیتے ہوئے ریاست کی 92 میونسپل کونسلوں اور 4 میونسپل پنچایتوں میں اراکین کے عہدوں کے لیے ہونے والے عام انتخابات کو ملتوی کردیا۔ لیکن اب سپریم کورٹ نے اگلے دو ہفتوں میں نئے الیکشن شیڈول کا اعلان کرنے کا حکم دیا ہے۔