مہاراشٹرا میں Omaicron کے پس منظر میں آج سے نئی پابندیاں جاری : دیکھئے کیا ہے نئی پابندیاں

1 7

ممبئی:31 ڈسمبر (ورق تازہ نیوز) پچھلے کچھ دنوں سے، ریاست میں کورونا کے مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ اومیکرون کے مریضوں کی تعداد میں بھی تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ جمعرات کی شب وزیر اعلی اودھو ٹھاکرے کی قیادت میں محکمہ صحت اور کووڈ ٹاسک فورس کے درمیان میٹنگ کے بعد آج سے ریاست میں کچھ نئی پابندیاں عاءد کر دی گئی ہیں۔

جس کے تحت تقریبات اور شادیاں صرف 50 افراد کی موجودگی میں ہی منعقد کی جاسکتی ہیں۔ جنازے میں 20 افراد کو شرکت کی اجازت ہے۔ سیاحتی مقام پر حکم جمع بندی نافذ کر دیا گیا ہے۔ مقامی انتظامیہ کو سخت پابندیاں لگانے کی اجازت رہے گی۔

دوسری جانب نئے سال کو الوداع کرنے کی تیاری کرتے ہوئے کورونا نے شہریوں میں تشویش پیدا کردی ہے۔ ممبئی سمیت ریاست میں ایک بار پھر کورونا متاثرین میں اضافہ ہو رہا ہے۔ اومکرون کے متاثرین کی تعداد میں اضافے نے انتظامیہ کی تشویش میں اضافہ کر دیا ہے۔

اس لیے جمعرات کو ہونے والی میٹنگ کے بعد ریاست میں پابندیاں لگانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

پابندیاں کیا ہیں؟

  • ثقافتی، مذہبی، سیاسی تقریبات اور شادیاں صرف 50 افراد کی موجودگی میں منعقد کی جاسکتی ہے۔
  • نماز جنازہ میں صرف 20 افراد کو شرکت کی اجازت
  • سیاحتی مقامات پر حکم امتناعی و جمع بندی
  • اس کے علاوہ کورونا کی سابقہ پابندیاں برقرار بھی رہیں گی۔
  • نماز جنازہ میں صرف 20 افراد کو شرکت کی اجازت
  • سیاحتی مقامات پر حکم امتناعی و جمع بندی
  • اس کے علاوہ کورونا کی سابقہ پابندیاں برقرار بھی رہیں گی۔

ریاست میں آج 198 اومیکرون کیسز ریکارڈ کیے گئے۔

ریاست میں آج اومیکرون سے متاثرہ 198 مریض رجسٹرڈ ہوئے۔ ریاست میں اب تک 450 اومکرون انفیکشن کی اطلاع ملی ہے۔ ان میں سے 125 مریضوں کو اومیکرون سے شفاء حاصل ہوئی ہے۔