’’مودی کو مارڈالنے تیار رہیں‘‘، کانگریس لیڈر کے بیان پر مقدمہ درج ٗویڈیو وائرل

885

بھوپال: مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اور کانگریس کے سینئر لیڈر راجہ پٹریا کے وزیر اعظم نریندر مودی کے بارے میں قابل اعتراض بیان دینے کے بعد وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا نے آج ان کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی ہدایت دی ہے۔
نامہ نگاروں سے بات چیت کے دوران ڈاکٹر نروتم مشرا نے کہا کہ انہوں نے مسٹر پٹیریا کا بیان سنا ہے۔ اس سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ یہ مہاتما گاندھی کی کانگریس نہیں ہے۔ یہ کانگریس اٹلی کے مسولینی کی ذہنیت رکھتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سابق وزیر نے وزیراعظم کے خلاف انتہائی قابل اعتراض بیان دیا ہے۔ وہ ضلع سپرنٹنڈنٹ آف پولیس کو اس معاملے میں ان کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کی ہدایت دے رہے ہیں۔

https://twitter.com/shiprajha26/status/1602244884731424768?ref_src=twsrc%5Etfw%7Ctwcamp%5Etweetembed%7Ctwterm%5E1602244884731424768%7Ctwgr%5E6aa85296967f745dc033d98349c8d8750e6ec089%7Ctwcon%5Es1_c10&ref_url=https%3A%2F%2Furdu.munsifdaily.com%2Fsocial-media-news%2Fbe-ready-to-kill-modi-case-registered-against-congress-leader%2F
مسٹر پیٹریا کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے، جس میں وہ مسٹر مودی کے بارے میں مبینہ قابل اعتراض اور اشتعال انگیز الفاظ بولتے ہوئے سنائی دے رہے ہیں۔مدھیہ پردیش میں اگلے سال اسمبلی انتخابات ہونے والے ہیں۔ اس سے پہلے کانگریس کے سینئر لیڈر مسٹر پٹیریا کا یہ بیان سامنے آ یا ہے جس میں انہوں نے کہا تھا کہ ملک اور اس کے دستور کو بچانے کے لئے مودی کا قتل کرنے عوام کو تیار رہنے کی ضرورت ہے۔

ان کے اس بیان پر جب اعتراضات ہوئے تو انہوں نے واضح کیا کہ قتل سے ان کا مطلب مودی کو جان سے مارنا نہیں بلکہ اسے شکست سے دوچار کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میڈیا ان کے بیان کو توڑ مروڑ کر اور اپنی مرضی کے مطابق اس کا مطلب نکال رہا ہے۔