• 425
    Shares

ممبئی: یوم عاشورہ پر ممبئی ہائی کورٹ نے کورونا کی دونوں خوراکیں لگانے والے جانثاران حسین کو جلوس عاشورہ تعزیہ داری اور ماتمی جلوس کی مشروط اجازت دے دی ہے۔ جسٹس تاتڑے اور جسٹس چوہان پر مشتمل ہائیکورٹ کی دو رکنی بینچ نے اپنے اہم فیصلہ میں سات ٹرک پرتعزیہ کے ساتھ جلوس نکالنے کو اجازت دیدی ہے یہ جلوس ممبی کے امامباڑہ علاقے سے نکل کر مجگاوں میں واقع شعیہ قبرستان رحمت آباد پر اختتام پذیر ہو گا

اس میں کورونا اصول و ضوابط کا خیال رکھنا لازمی ہو گا ہائیکورٹ میں آل انڈیا ادارہ تحفظ حسینت نے عرضی داخل کرکے جلوس کی اجازت طلب کی تھی جس پر سماعت کرتے ہوئے عدالت نے 100 جانثاران حسین رضی اللہ تعالی عنہ کو مشروط اجازت دی ہے شرکا جلوس کوجلوس میں شرکت کے لئے دونوں خوراکیں لگانا لازمی ہے بلاخوراک لگانے والوں کو اجازت نہیں ہو گی اس کے ساتھ قبرستان میں صرف 25 سوگوران حسین رضی اللہ تعالی عنہ کو اجازت ہو گی کیونکہ تنگ گلی کی وجہ سے یہ فیصلہ لیا گیاہے جبکہ سات ٹرک پر تعزیہ اور ماتمی جلوس اور اعزاداری کو اجازت دی گئی ہے یہ ٹرک گشت کرتے ہوئے شام 4 بجے سے 7 بجے تک قبرستان پہنچ سکتی ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔