ریاض: عمران خان اور ان کے حامیوں نے پاکستان کے نئے وزیر اعظم شہباز شریف  اور ان کی نئی حکومت کے لیے معاملات کو بہت مشکل بنا دیا ہے۔ تین روز کے لیے سعودی عرب دورے پر پہنچنے والے شہباز شریف کو مدینہ منورہ میں فضیحت کا سامنا کرنا پڑا۔ شہباز شریف کے وفد کو مسجد نبوی کے اندر دیکھ کر لوگوں نے چور چور کے نعرے لگانے شروع کر دیے اور مسجد نبوی کی حرمت کو پامال کیا۔ اس کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے۔ تاہم اس معاملے پر سعودی عرب کی حکومت کا ردعمل سامنے آیا ہے۔سعودی عرب کی حکومت کے مطابق یہ عمران خان کی پارٹی تحریک انصاف کے حامی تھے جو ہجوم میں حکومتی وفد کے خلاف ‘چور، چور’ کے نعرے لگا رہے تھے۔ سعودی عرب کے حکام نے نعرے لگانے والے ایسے 100 افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔