مسجدِ نبوی ﷺمیں نمازیوں کی سہولت لیے بنے متحرک گنبد کیسے دِکھتے ہیں

264

مسجد نبوی ﷺکے گنبد اپنی منفرد ساخت کے ساتھ فن تعمیر کی جمالیات کا منفرد پہلو ہیں۔ اُنہیں جدید تعمیرجدید ترین انجینئرنگ ڈیزائن کے مطابق جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے اس انداز میں تیار کیا گیا ہے تاکہ مسجد میں آنے والے نمازیوں کو مناسب ماحول فراہم کیا جا سکے۔

سعودی پریس ایجنسی ’ایس پی اے‘ کے مطابق مسجد نبوی کے گنبد کو مختلف تعمیراتی شکلوں کے ساتھ ڈیزائن کیا گیا ہے جس میں بہت سی آیات اور قرآنی سورتیں دیکھی جا سکتی ہیں۔ مختلف سائز کی کھڑکیوں کو ایسے تیار کیا گیا ہے کہ ان سے سورج کی روشنی اور تازہ ہوا بہ آسانی اندر داخل ہوسکتی ہے۔

اس کے علاوہ مسجد نبوی کی حالیہ توسیع میں 27 متحرک گنبد بنائے گئے ہیں جو پوری مسجد میں منفرد انجینئرنگ اور آرکیٹیکچرل ڈیزائن کے ساتھ تقسیم کیے گئے تھے۔ مسجد نبوی کے امور کی ایجنسی کے آپریشن اور مینٹیننس ڈیپارٹمنٹ کے زیر نگرانی ایک خصوصی کنٹرول روم کے ذریعے گنبدوں کے کھلنے اور بند ہونے کا عمل خود بخود کنٹرول کیا جاتا ہے۔یہ گنبد فطرت کے مطابق مناسب وقت پر سورج کی روشنی اور ہوا کے داخلے کی اجازت دیتا ہے۔ فضا اور ہوا کے معیار اور پاکیزگی کی سطح اور نمازیوں کو براہ راست سورج کی روشنی سے بچانے اور مسجد کے اندر ہوا کو ٹھنڈا رکھنے کے ماحول کے مطابق تیار کیا گیا ہے۔


مسجد نبوی کے متحرک گنبدوں کو بھی ہم آہنگی کے ساتھ ڈیزائن کیا گیا تھا۔ ہر گنبد کے ضلع کی لمبائی 18 میٹر اور اس کا وزن 80 ٹن ہے۔ یہ لوہے کی سلاخوں پر چلتا ہے جس کی کل لمبائی 1573 میٹر ہے۔ گنبدوں میں جمالیاتی لمس کو شامل کرنے کے لیے بہت سے مواد شامل ہیں۔ وہ اندر سے ٹھوس دیودار کی لکڑی کے سلیٹوں سے ڈھکے ہوئےہیں اور نیلے فیروزے سے جڑی ہوئی لکڑی کی شکلوں سے سجے ہوئےہیں۔ گنبدوں کا رنگ باہر سے خاکستری ہے۔