ممبئی : ذاکر نائیک کی این جی او پر پابندی پہلی بار حکومت نے نومبر 2016 میں غیر قانونی سرگرمیاں (روک تھام) ایکٹ کے تحت لگائی تھی۔ مبلغ کی تنظیم پر ان کی ‘قابل اعتراض اور تخریبی’ تقاریر کی وجہ سے پابندی لگا دی گئی تھی جس میں مبینہ طور پر نفرت کو فروغ دیا گیا تھا۔ ایسا حکومت کا الزام ہے

ایک نوٹیفکیشن میں، وزارت داخلہ نے کہا کہ IRF ایسی سرگرمیوں میں ملوث رہا ہے جو ملک کی سلامتی کو متاثر کر سکتی ہے اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو بگاڑنے اور ہندوستان کے سیکولر تانے بانے میں خلل ڈال سکتی ہے۔

ذاکر نائیک کو اس وقت بھارت میں مجرمانہ الزامات کا سامنا ہے اور وہ ایک مطلوب ملزم ہے۔ اس وقت وہ ملائیشیا میں مقیم ہیں۔ بھارتی حکومت انھیں واپس لانے کی کوشش کر رہی ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔