• 425
    Shares

ممبئی، 9اکتوبر(یو این آئی) مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے آج حج ہاؤس ممبئی میں حج، 2022 کی تیاریوں سے متعلق حج کمیٹی آف انڈیا کے سینئر افسران کے ساتھ تبادلہ خیال کیا آئندہ 21 اکتوبر کو نئی دہلی میں منعقد ہونے والی حج جائزہ میٹنگ میں حج، 2022 سے متعلق مختلف مسائل تفصیلی تبادلہ خیال کیا جائے گا یہاں جاری ایک پریس ریلیز کے مطابق حج کمیٹی کی آئندہ ہونے والی میٹنگ میں وزارت اقلیتی امور، وزارت خارجہ،، صحت اورشہری ہوابازی کے حکام، سعودی عرب میں ہندوستان کے سفیر، جدہ میں قونصل جنرل آف آنڈیا اور دیگر سینئر افسران موجود ہوں گے۔

وزیر موصوف نے کہا کہ کورونا وبا کے پیش نظر سعودی عرب کی حکومت کے فیصلے کی بنیاد پر 2020 اور 2021 میں فریضہ حج کی ادائیگی ممکن نہیں ہوسکی تھی۔لہذااب حج،2022 کا اعلان نئی دہلی میں 21 اکتوبر کو ہونے والی جائزہ میٹنگ میں مختلف محکموں کے ساتھ بات چیت کے بعد کیا جائے گا۔

مسٹر نقوی نے مزید کہا کہ کورونا پروٹوکول، صحت اور صفائی ستھرائی کے حوالے سے حج، 2022 کے لیے جانے والے عازمین حج کے لیے ہندوستان اور سعودی عرب میں خصوصی تربیت کا اہتمام کیا جا رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ انڈونیشیا کے بعد ہندوستان سے سب سے زیادہ لوگ سفر حج پر روانہ ہوتے ہیں۔حج2022کے لئے درخواست دینے کا عمل مکمل طور پرصد فی صد ڈیجیٹل ہوگا۔آج حج ہاؤس ممبئی میں اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی نے اس عمل کا آغاز بھی کردیا۔

انہوں نے بتایا کہ بغیر محرم(مرد رشتہ دار)کے 837سے زیادہ خواتین نے حج2021کے لئے درخواست دی تھی۔حج2020کے لئے 2100سے زائد خواتین نے بغیر محرم حج کے لئے درخواست دی تھی۔اب یہ خواتین حج2022کے لئے جاسکیں گی۔بغیر محرم کے حج پر جانے کے لئے جن خواتین نے حج2020 اور حج2021کے لئے درخواست دی تھی، وہ درخواستیں حج 2022کے لئے بھی قابل عمل ہوگی۔اس کے ساتھ ہی 2022کے لئے نئی درخواست دینے والی خواتین کو بھی بلاقرعہ اندازی کے شامل کرلیا جائے گا۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔