لکھنؤ: ہزاروں مسلمانوں نے شیعہ وقف بورڈ کے سابق سربراہ وسیم رضوی کے خلاف اتوار کے روز لکھنؤ کے بڑے امام باڑے میں احتجاجی مظاہرہ کیا جس نے قرآن مجید سے 26 آیات کو ہٹانے کے لئے عدالت عظمی درخواست دائر کی ہے۔سنی اور شیعہ علماء نے رضوی کے خلاف احتجاج کی قیادت کی اور ان کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا۔ اتوار کے روز پرانے شہر میں مظاہروں کے پیش نظر سیکیورٹی کے بے مثال انتظامات کیے گئے تھے۔چھوٹا امام باڑہ سے ٹیلہ والی مسجد تک بیریکیڈس لگائے گئے تھے اور موقع پر پولیس کی مضبوط موجودگی واضح تھی۔ملحقہ مکانات اور عمارتوں کی چھتوں پر پولیس اہلکار بھی تعینات کردیئے گئے تھے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں