ایک لڑکی نے اپنے بوائے فرینڈ کو گردہ عطیہ کیا جس نے اپنے آپریشن کے چند ماہ بعد ہی اس سے رشتہ ختم کردیا اور الزام لگایا کہ اس نے محض یہ اچھا دکھنے کیلئے کیا۔امریکا میں رہنے والی 30 سالہ کولین لی نے کہا کہ اس وقت اس کے بوائے فرینڈ کو گردے کی پیوند کاری کی ضرورت تھی کیونکہ وہ گردے کی دائمی بیماری کے ساتھ زندگی گزارنے کے لیے جدوجہد کر رہا تھا جس کی وجہ سے اسے صرف 17 سال کی عمر میں ڈائیلاسز کی ضرورت پڑی۔

کولین نے اپنا ایک گردہ عطیہ کرنے کے لیے ایک ٹیسٹ کیا جو میچ ہوگیا تاہم آپریشن کے ایک سال سے بھی کم عرصے کے بعد اس نے دھوکہ دیا اور پھر چند ماہ بعد اس سے رشتہ توڑ دیا۔کولین نے انکشاف کیا کہ اس کے سابق بوائے فرینڈ نے اسے بتایا کہ اس کا گردہ 5 فیصد سے بھی کم کام کرتا ہے اور یہ دیکھنے کے لیے ٹیسٹ کروانے کا فیصلہ کیا کہ آیا ہم ایک میچ ہیں کیونکہ میں اسے مرتے ہوئے نہیں دیکھنا چاہتی تھی۔

تمام مراحل سے ہونے کے بعد کولین نے گردہ عطیہ کیا اور دونوں کامیاب ٹرانسپلانٹ کے بعد مکمل صحت یاب ہو گئے۔کولین نے وضاحت کی کہ صرف 3 ماہ بعد ہی ہمارا رشتہ کشیدہ ہوگیا اور اس نے یہ کہہ کر رشتہ ختم کر دیا کہ اگر ہم ایک دوسرے کے لیے ہیں تو خدا ہمیں آخر کار ساتھ لے آئے گا اور اس نے اسے تمام سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر اسے بلاک کر دیا اور اس پر ’’اچھا نظر آنے‘‘ کے لیے گردہ عطیہ کرنے کا الزام بھی لگا دیا۔

لڑکی ٹک ٹاک اسٹار ہے اس نے یہ درد ناک واقعہ لوگوں سے شیئر کیا جس پر بہت سے لوگوں نے اپنے سابق بوائے فرینڈ کی جان بچانے پر اس کی تعریف کی اور تبصرہ کیا کہ وہ اس کے لائق نہیں تھا۔یاد رہے کچھ روز قبل میکسیکو میں بھی ایسا ہی واقعہ پیش آیا تھا جہاں لڑکے نے ایک لڑکی کی محبت میں گرفتار ہوکر اس پر آنکھ بند کرکے بھروسہ کرتے ہوئے اس کی ماں کو اپنا گردہ ہی عطیہ کردیا جب کہ اس کی محبوبہ نے ایسا سبق سکھایا ہے کہ شاید ہی وہ اب دوبارہ کسی پر بھروسہ کرسکے کیونکہ لڑکی نے اس سے سارے رشتے ناطے توڑ دیئے، نا اسے لڑکی ملی اور اوپر سے وہ اپنے ایک گردے سے بھی ہاتھ دھو بیٹھا۔