Aزمانہ بدل رہا ہے اور اس تبدیلی کی رفتار گزشتہ صدیوں کے مقابلے میں کئی زیادہ ہے، جدید زمانے کی اس دوڑ میں 21 ویں صدی نے کرنسی کی ایک ایسی شکل دریافت کی جو کہ آج سے پہلے کبھی تصور بھی نہیں کی جا سکتی تھی، اس قسم کی کرنسی کو ”کرپٹو کرنسی” کا نام دیا گیا جو کہ کرپٹولوجی اور کرپٹو گرافیکل تکنیک سے تیار کی گئی تاہم اس میں بہت سی کرنسیز ہیں . بٹ کوائن اس کی سب سے پہلی کرنسی ہے جو سال 2009 میں متعارف کروائی گئی اور بہت تھوڑے ہی عرصے میں مقبولیت کی انتہاء کو پہنچ گئی .

آج ڈیجیٹل کرنسی کے طور پر استعمال ہونے والے اس بٹ کوائن کی قیمت تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے، اقتصادی جریدے فوربز کی رپورٹ کے مطابق ایک بٹ کوائن کی قیمت 36 ہزار 462 ڈالرز کی بلندی کا ریکارڈ توڑ چکی ہے جوبھارتی کرنسی کے حساب سے 26 لاکھ 98 ہزار 188 روپے کے قریب بنتی ہے.

Easiest way to buy/sell 100s of crypto. Signup on CoinSwitch Kuber using my referral and first 3 users will get Rs. 50 worth FREE BTC. https://coinswitch.co/in/refer?tag=wWmP

کرپٹو کرنسی کیا ہے؟

درحقیقت کرپٹو کرنسی اثاث کی ڈجیٹل شکلیں ہیں واضح رہے کہ ڈجیٹل اثاث میں اور روایتی اثاث کی الیکٹرونک لین دین میں فرق ہے.تاہم ڈجیٹل اثاث ایسی کرنسی ہے جس کے تین مقاصد ہیں:• پہلا یہ کہ اسے لین دین کے ایک ذریعے کے طور پر مکمل تحفظ کے ساتھ استعمال کیا جاسکے.• دوسرا یہ کہ جعل سازی ممکن نہ ہو.• تیسرا یہ کہ ٹرانسفر کی واقعتاً تصدیق کی جاسکے.بٹ کوائن کی مقبولیت اور تیزی سے بڑھتے رجحان کی وجہ سے آج کل سب ہی اس سوال کا جواب جاننا چاہتے ہیں کہ آخر اُنہیں بٹ کوائن سے کیا فائدہ ملے گا؟ تو اس سوال کا جواب کچھ اس طرح ہے.

روایتی کرنسی کا تمام ریکارڈ اور اس کی منتقلی کی اجازت سینٹرل بینک کے پاس ہوتی ہے، جبکہ منتقلی کے دوران فیس، ٹیکس اور کئی اقسام کے معاوضوں کی کٹوتی بھی کی جاتی ہے تاہم کرپٹو کرنسی (بٹ کوائن یا کوئی اور) میں ایسا معاملہ نہیں، یہ صرف لینے اور دینے والے تک ہی محدود ہوتی ہے.روایتی کرنسی کا ریکارڈ بینک کے ڈجیٹل لیجر میں ہوتا ہے جسے با آسانی ٹریک کیا جاسکتا ہے اور آپ کی دولت کو کبھی فریز ہوجانے کا خطرہ رہتا ہے جبکہ کرپٹو کرنسی میں آپ کی دولت مکمل طور پر آپ کی ملکیت ہوتی ہے.روایتی کرنسی میں جعل سازی ممکن ہے جبکہ کرپٹو کرنسی کو کبھی بھی جعلی طریقے سے نہیں بنایا جاسکتا.روایتی کرنسی سکوں یا کاغذ کے نوٹوں کی شکل میں ہوتی ہے جبکہ بٹ کوائن کی کوئی شکل نہیں ہوتی یہ کمپیوٹر میں موجود ڈیٹا ہوتا ہے جس کے چھِن جانے یا چوری ہو جانے کا ڈر نہیں رہتا.

بِٹ کوائن کا مستقبل کیا ہے؟

اس شعبے سے جڑے اکثر ماہرین کا خیال ہے کہ کرپٹو کرنسی ہی مستقبل کی کرنسی ہیں، یعنی اب ہم فیئیٹ کرنسی (نوٹوں اور سکوں) سے نکل کر کرپٹو کرنسی (ڈیجیٹل کرنسی) کے دور میں داخل ہو چکے ہیں، بس اسے کچھ ترقی اور بہتری کی ضرورت ہے تاکہ یہ ہمارے رائج بینکنگ سسٹم کے ساتھ قابلِ استعمال ہوسکے، تاہم اس کی بڑھتی مقبولیت اور قیمت میں اضافے کو دیکھ کر واضح ہے کہ بٹ کوائن یا دیگر کرپٹو کرنسیز کا مستقبل روشن ہے.ہماری ویب کی جانب سے یہ مضمون صرف آپ کی معلومات میں اضافہ کرنے کے لئے ہے، تاہم کسی بھی قسم کی سرمایہ کاری کرنے سے پہلے خود معلومات حاصل کر کے اپنی تسلّی ضرور کر لیں..