قطر : اسکول بس میں اکیلے چھوٹنے کے بعد 4 سالہ ہندوستانی نژاد لڑکی کی دردناک موت

692

دوحہ : ایک افسوسناک واقعہ میں، چار سالہ منسا مریم جیکب اتوار 11 ستمبر کو اپنی سالگرہ کے موقع پر قطر میں اس کی اسکول بس کے اندر مردہ پائی گئیں۔

خلیج ٹائمز کے مطابق، منسا واکرا میں کنڈرگارٹن میں پڑھ رہی تھی، اور اسے ایک بند اسکول بس میں چار گھنٹے سے زیادہ وقت تک تنہا چھوڑ دیا گیا۔

رپورٹس میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ منسا ابیلاش چاکو اور سومیا جوڑے کی دوسری بیٹی ہے، جن کا تعلق کیرالہ سے ہے۔

ایشینیٹ نیوز سے بات کرتے ہوئے، کوٹائم کے چنگوانم میں بچے کے رشتہ دار نے بتایا کہ وہ اتوار کی صبح اسکول گئی تھی۔ "تاہم، وہ سو گئی اور کسی نے محسوس نہیں کیا۔ گاڑی پیچھے رہ گئی اور وہ تیز گرمی میں اس کے اندر پھنسی رہ گئی اور بعد میں اسکی موت ہوگئی۔

قطری وزارت، اور متعلقہ حکام ضروری اقدامات کریں گے اور ساتھ ہی ضابطوں کے حوالے سے اور جاری تحقیقات کے نتائج کے مطابق قصور واروں کو زیادہ سے زیادہ سزا دی جائے گی۔

"وزارت اپنے طلبا کے لیے سیکورٹی اور حفاظتی معیارات کے اعلیٰ ترین معیار پر عمل پیرا ہونے کی اپنی خواہش کا بھی اعادہ کرتی ہے، اور اس سلسلے میں کسی کوتاہی کو برداشت نہیں کرے گی۔ وہ متوفی طالب علم کے اہل خانہ سے دلی تعزیت کا اظہار کرتی ہے۔” وزارت تعلیم قطر