Waraqu E Taza Online
Nanded Urdu News Portal - ناندیڑ اردو نیوز پورٹل

قربانی کے تعلق سے مہاراشٹر حکومت کے اعلان کے بعد مسلمانوں میں بے چینی :نسیم خان

arif

ممبئی ،14جولائی :(یواین آئی )مہاراشٹر کے سابق وزیر اور سینئرکانگریسی لیڈرمحمد عارف نسیم خان نے آج یہاں مہاراشٹر حکومت کی جانب سے عیدالاضحی کے موقع پر کوئی واضح احکامات جاری نہ کئے جانے اور روایتی بکرامنڈیوں کی اجازت نہ دینے پربرہمی کااظہارکرتے ہوئے مطالبہ کیاہے کہ حکومت اس سلسلے میں فوری احکامات جاری کرے اورمسلمانوں کو ان کے اہم فریضہ کی ادائیگی کیلئے انتظامات کرے ۔

واضح رہے کہ نسیم خان نے اس تعلق سے وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے اوروزیرمحصول بالاصاحب تھوراٹ سمیت دیگر کو ایک مکتوب روانہ کرکے یہ مطالبہ کیاتھاکہ حکومت اس سلسلے میں جلد از جلد فیصلہ کرے کیوں کہ یکم اگست کو عیدالاضحی کاتہوار منایاجانے والاہے نیز اسلامی تعلیمات کے مطابق ہرصاحب حیثیت مسلمان پر قربانی واجب ہے یعنی کہ اسے ضروری قراردیاگیاہے لہذااس کی ادائیگی کیلئے حکومت انتظامات کرے ۔اس سلسلے میں آج وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے نے مسلم وزرا،مسلم اراکین اسمبلی اور دیگر کوویڈیوکانفرنس کے ذریعے خطاب کرتےہوئے ریاست کے مسلمانوں سے درخواست کی ہے کہ وہ کوروناوائرس بیماری کے پیش نظر عید سادگی سے منائیں نیز بکرامنڈیوں سے بیماری پھیلنے کاخطرہ ہے لہذابکرامنڈی لگانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔


وزیراعلیٰ کے بیان پر ردعمل ظاہرکرتے ہوئے نسیم خان نے کہاکہ ہم حکومت کی جانب سے عیدالاضحی کو سادگی سے منائے جانے کی اپیل کااحترام کرتے ہیں اور سماجی فاصلہ برقراررکھتے ہوئے عیدالاضحی منائے جانے کابھرپوریقین دلاتے ہیں کیونکہ ماضی اس وباکے دوران ہی شب برات ،رمضان المبارک اور عیدالفطر جیسے تہواروں کے موقع پر مسلمانوں نے سادگی کامظاہرہ کرتےہوئے کسی بھی طرح سے سماجی فاصلے کی خلاف ورزی نہیں کی تھی چاہے وہ شب برات کے موقع پر قبرستانوں میںجاناہویارمضان المبارک کے موقع پر منعقد کی جانے والی افطارپارٹی ہو،اجتماعی عبادت ہویاپھرعید الفطر کی مساجد اور عید گاہ میں نمازوں کی ادائیگی ہو۔
انھوں نے کہاکہ چونکہ قربانی ہر صاحب حیثیت مسلمان پر واجب ہے لہذااس کی ادائیگی مذہب اسلام کے تعلق سے انتہائی ضروری ہے ۔یہی وجہ ہے کہ وزیراعلیٰ حالیہ بیان سے مسلمانوں میں بے چینی اور ناراضگی پائی جارہی ہے ۔
نسیم خان نےمطالبہ کیاہے کہ حکومت قربانی کے تعلق سے جلد از جلد گائیڈلائن جاری کرے اور ریاست کامسلمان سماجی فاصلہ برقراررکھتے ہوئے اپنے فرض کی ادائیگی کیلئے تیارہے ۔

انھوں نے مزید کہاکہ جس طرح سے حکومت نے گنپتی کاتہوار گنیش اتسومنانے کی مشروط اجازت دی ہے اسی طرح سے مسلمانوں کوبھی عیدالاضحی منائے جانے کیلئے ایسی چند شرائط عائد کی جائیں جس سے کہ وہ اپنامذہبی فریضہ بھی اداکرسکیں اور حکومت کی ہدایتوں کی کوئی خلاف ورزی نہ ہو،