لکھنو: اترپردیش اسمبلی کے بجٹ سیشن سے عین ایک دن قبل بہوجن سماج پارٹی(بی ایس پی)سپریمو مایاوتی نے یوگی حکومت کو نظم ونسق اور کسانوں کے مسائل کے مسئلے پر گھیرنے کے اشارے دے دئیے ہیں۔ مایاوتی نیچہارشنبہ کواپنے ایک ٹوئٹ میں لکھا‘ یو پی میں اسمبلی اور پنچایت انتخاب سے پہلے لیڈروں، وکیلوں اور تاجروں وغیرہ کے قتل کا سلسلہ شروع ہوجانا باعث تشویش ہے ۔ ان واردات کو سنجیدگی سے نہ لے کر انہیں پرانی رنجش وغیرہ بتا کر ملزمین کے خلاف سخت کاروائی نہیں کرنا کافی تکلیف دہ و قابل مذمت ہے ۔حکومت اس پر دھیان دے ۔انہوں نے کہا‘‘یوپی اسمبلی کے کل سے شروع ہورہے اجلاس میں کسان و مفاد عامہ کے اہم مسائل کے ساتھ ساتھ جرائم پر کنٹرول و نظم ونسق کے معاملے میں حکومت کی سخت لاپرواہی و بدلے کے جذبے سے کاروائی وغیرہ کے تئیں حکومت کو عوام کے تئیں جوابدہ بنانے کی کوشش کرنے کی پارٹی اراکین اسمبلی کو ہدایت دی ہے ۔ادھر پارٹی ذرائع نے بتایا کہ محترمہ مایاوتی نے آج پارٹی قانون ساز اسمبلی کے اراکین کی میٹنگ بلائی ہے جس میں پارٹی کے غیر مطمئن لیڈروں کو بھی مدعو کیا گیا ہے ۔ میٹنگ میں جمعرات سے شروع ہورہے اجلاس کے بارے میں پارٹی کی حکمت عملی پر خوروخوض کیا جائے گا۔


اپنی رائے یہاں لکھیں