غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق منگل کے روز فیس بک حکام کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وہ اپنے متنازعہ چہرے کی شناخت کے نظام کوختم کرتے ہوئے اس ٹیکنالوجی کے معاشرے پر پائے جانے والے خدشات کی وجہ سے ایک ا رب صارفین کے فیس پرنٹ(اسکین ڈیٹا) کو ڈیلیٹ کردے گا۔

اس تبدیلی کے نتیجے میں فیس بک تصاویر یا ویڈیوز میں لوگوں کے چہروں کو خود بخود نہیں پہچان سکے گی جبکہ صارفین اب تصویر یا ویڈیو میں کسی شخص کو ٹیگ کرنے کے لیےچہرے کی شناخت کا فیچر استعمال نہیں کرسکیں گے۔

صارفین اب کسی تصویر یا ویڈیو میں کسی شخص کو ٹیگ کرنے کے لیےچہرے کی شناخت کا فیچر استعمال نہیں کرسکیں گےخبر رساں ایجنسی کے مطبق فیس بک کی جانب سے یہ اقدام احساس دستاویزات لیک ہونے کے بعد کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ چہرے کی شناخت کے معاملے پر فیس بک کو کئی عرصے سے تنقید کا سامنا تھا۔

یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے مارک زکر برگ نے فیس بک کا نام تبدیل کرنے کا اعلان کیا اور بتایا کہ اب فیس بک، واٹس ایپ، انسٹاگرام کی پیرنٹ کمپنی کا نام میٹا ’META‘ رکھ دیا گیا ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔