• 425
    Shares

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ فولک ایسڈ انسانی جسم کے لیے بنیادی جُز ہے جس کے استعمال کے صحت پر بے شمار فوائد حاصل ہوتے ہیں جبکہ فولک ایسڈ خواتین کے لیے شادی سے قبل اور حمل کے دوران ناگزیر قرار دیا جاتا ہے۔طبی ماہرین کے مطابق فولک ایسڈ کو فولیٹ اور وٹامن بی 9 کے نام سے بھی جانا جاتا ہے، فولک ایسڈ انسانی جسم میں موجود خون میں لال خلیوں کی تشکیل اور پٹھوں کے خلیوں ( باڈی سیلز) کی مرمت کا کام کرتا ہے، فولک ایسڈ چھوٹے بڑوں سب کے لیے مفید ہے خصوصاً خواتین کے لیے یہ بنیادی وٹامن قرار دیا جاتا ہے۔

طبی ماہرین، گائناکالوجسٹ و آبسٹیٹریشن کی جانب سےحاملہ خواتین کو فولک ایسڈ کی ٹیبلٹ استعمال کرنے کامشورہ دیاجاتا ہے لیکن بہت سی خواتین یہ استعمال نہیں کرتیں، ماہرین کا کہنا ہے کہ حاملہ خواتین کو فولک ایسڈ کا استعمال لازمی کرنا چاہیے، یہ ناصرف ماں کی صحت بہتر بلکہ حمل کے دوران خون کی کمی سے بھی بچاتا ہے ۔

طبی ماہرین کے مطابق فولک ایسڈ کا استعمال حمل کے دوران پیچیدگیوں کو آسان اور بچے کی تشکیل میں اہم کردار ادا کرتا ہے، حاملہ خواتین کو اپنے آنے والے بچے کو پیدائشی نقائص سے بچانے کے لیے بھی اسے آٹے میں ملا کر استعمال کیا جا سکتا ہے۔

فولک ایسڈ کے استعمال سے بلند فشارِ خون اور دل کے امراض میں بھی کمی واقع ہوتی ہے اور ہارٹ اٹیک کے خطرات کم ہوتے ہیں۔

طبی ماہرین کے مطابق روزانہ کی بنیاد پر اگر فولک ایسڈ کا استعمال خود پر لازم کر لیا جائے تو چار سال کے اندر اندر فالج کا خطرہ 73 سے 75 فیصد تک کم ہو جاتا ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔