ریاض : مراقش نے یمن میں بحران کے حل کے لیے سعودی عرب کی طرف سے پیش کردہ امن اقدام کی حمایت کا اعلان کرتے ہوئے استحکام اور علاقائی سالمیت سعودی شہریوں اور غیر ملکیوں کی سلامتی اور حفاظت کیلیے سعودی عرب کی طرف سے اٹھائے گئے اقدامات کی حمایت کی ہے۔ منگل کو مراقش اور سعودی عرب کے وزرائے خارجہ نے رباط میں ملاقات کی۔سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان نے اپنے مراکشی ہم منصب ناصر بوریطہ سے ملاقات کی۔ مراقش کی وزارت خارجہ کے ایک بیان کی نقل العربیہ چینل کو موصول ہوئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ دونوں ممالک کے وزرا خارجہ نے فلسطینی علاقوں میں پیشرفت، مشرق وسطی میں امن عمل اور یمن کی صورتحال سمیت علاقائی امور پر تفصیلی بات چیت کی۔سعودی عرب اور مراقشی وزرائے خارجہ نے دونوں ممالک کی ریاستوں کی خودمختاری اور ان کی علاقائی سالمیت کا احترام کرنے کے عزم، عرب امور کے پرامن حل کے مطالبے اور عرب ممالک کے معاملات میں کسی بھی قسم کی غیر ملکی مداخلت کو روکنے پر متفق ہیں۔بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی وزیر خارجہ نے مراقش کی علاقائی سالمیت، مراکشی صحارا کے لیے اس کی مستقل حمایت، اور اس حوالے سے سعودی عرب کے دیرینہ اور اصولی موقف کا اعادہ کیا۔دونوں برادر ممالک کے وزرا خارجہ نے مسئلہ فلسطین کے پر امن حل کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے فریقین کے درمیان تعطل کا شکار امن بحال کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔


اپنی رائے یہاں لکھیں