فتح کا جشن منانے مراکشی کھلاڑی ماں کو رقص کے لئے میدان میں لے آئے مراکش

502

قطر کے الثمامہ سٹیڈیم میں مراکش، پرتگال کو صفر کے مقابلے میں ایک گول سے شکست دے کر کسی بھی ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں پہنچنے والی پہلی افریقن اور عرب ٹیم بن گئی ہے۔

مراکش ورلڈکپ کے سیمی فائنل میں پہنچنے والی پہلی عرب، پہلی افریقن اور دوسری اسلامی ملک کی ٹیم بن گئی ہے۔ پرتگال کے خلاف اس تاریخی فتح پر مراکشی کھلاڑی نے والدہ کیساتھ گراؤنڈ میں رقص کیا۔

دوسری جانب مراکش کے دیگر کھلاڑی گراؤنڈ میں اللہ کے حضور سجدہ ریز ہو گئے۔ قطر میں جاری فیفا ورلڈکپ کے تیسرے کوارٹر فائنل کا اختتام ہو گیا، ٹورنامنٹ کے کوارٹر فائنل میں پرتگال کو مراکش کے ہاتھوں شکست ہو گئی۔

ٹورنامنٹ کی فیورٹس میں شمار کی جانے والی پرتگال کوارٹر فائنل میں مراکش کو زیر کرنے میں ناکام رہی۔ مراکش نے کوارٹر فائنل میں پرتگال کو 0 کے مقابلے میں 1 گول سے شکست دی۔ مراکش نے میچ کے پہلے ہاف میں گول کر پرتگال کے خلاف برتری حاصل کی، جو میچ کے اختتام تک برقرار رہی۔