مشترکہ کسان محاذ کے لیڈر گرنام سنگھ نے کہا تھا کہ کسان آندولن اکتوبر تک جاری رہے گا۔ان کے اس بیان پر بھارتیہ کسان یونین کے ترجمان راکیش ٹکیٹ نے ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ آندولن غیر معینہ مدت تک چلے گا۔اس آندولن کی مدت کو لے کرکسی بھی طرح کی منصوبہ بندی نہیں کی گئی ہے۔ جب تک حکومت زرعی قوانین کو واپس نہیں لے لیتی،تب تک آندولن ختم نہیں ہوگا۔یاد رہے کہ دہلی کی سرحدوں پر احتجاج کرتے ہوئے کسانوں کو 79 دنوں کا وقت گزر چکا ہے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں