طالبان اب اپنی فوج میں ’خودکش حملہ آوروں‘ کی آفیشیل بھرتی کرے گا

0 2

افغانستان میں حکومت سنبھالنے کے بعد طالبان کو کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ اس کے حریف اسلامک اسٹیٹ نے ملک میں کئی مقامات پر خودکش حملے کیے ہیں اور طالبان کو نقصان پہنچایا ہے۔ اس کے پیش نظر اب طالبان نے اپنی فوج آفیشیل طور پر ’خودکش حملہ آوروں‘ کی بھرتی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس عمل کے ذریعہ وہ اسلامک اسٹیٹ پر قابو پانے کی کوشش کرے گا۔

واضح رہے کہ اگست 2021 میں اقتدار میں آنے سے پہلے طالبان نے 20 سال کی جنگ میں امریکی اور افغان فوجیوں پر حملہ کرنے اور انھیں شکست دینے کے لیے خودکش حملہ آوروں کا خوب استعمال کیا تھا۔ اب طالبان اقتدار میں آنے کے بعد بھی کچھ ایسا ہی کرنے جا رہا ہے۔ طالبان ان سبھی خود کش حملہ آوروں کو پھر سے اپنی فوج میں شامل کر رہا ہے جو ہمیشہ اس کے لیے تیار رہتے ہیں۔