دمشق : اسرائیل نے شام کے جنوبی علاقہ کو بمباری کا نشانہ بنایا۔ میڈیا کے مطابق فضائی دفاعی نظام نے کارروائی ناکام بنادی اور اکثر میزائلوں کو فضا میں ہی تباہ کردیا گیا۔ بشار حکومت کے ترجمان نے اپنے بیان میں بمباری کے نتیجہ میں ہونے والے نقصان کی تصدیق نہیں کی۔ چند برسوں کے دوران میں اسرائیل نے شام میں سینکڑوں فضائی حملے کئے۔ ان میں اسدی فوج کے ٹھکانوں کے علاوہ ایرانی ملیشیاؤں اور لبنانی حزب اللہ کو بھی نشانہ بنایا گیا۔ تاہم حالیہ ہفتوں میں ان حملوں میں تیزی آگئی ہے۔گذشتہ ماہ دارالحکومت دمشق کے اطراف اسرائیلی فضائی حملوں میں 3 شامی فوجی مارے گئے تھے۔ فروری میں شام میں 4 اسرائیلی فضائی حملے ریکارڈ کئے گئے۔دوسری جانب شام کے علاقے بادیہ شام میں داعش نے فوجی بس پر حملہ کیا جس کے نتیجہ میں سکیورٹی فورسز کے 15 اہلکار ہلاک ہوگئے۔ حکام کا کہنا ہیکہ کارروائی میں 18 سے ز ائد زخمی ہوئے ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیا کہ ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے کیونکہ 2اہلکاروں کی حالت تشویشناک ہے۔رواں سال کے آغاز سے داعش بادیہ شام میں 61 اسدی فوجیوں کو ہلاک کرچکی ہے۔ 20 جنوری کو حسکہ میں داعش نے اپنے ساتھیوں کو باآسانی چھڑا لیا تھا۔