دمشق: شام میں ایران اور روس ایک دوسرے کے اثرورسوخ کو کم کرنے کے لیے کوشاں ہیں۔ اگرچہ دونوں ممالک بشارالاسد کے دفاع میں پیش پیش ہیں، مگر دونوں کو ایک دوسرے سے بھی شکایات ہیں۔ شامی مبصر برائے انسانی حقوق کے مطابق مغربی فرات، حسکہ اور قامشلی جیسے اہم شہروں میں ایک طرف ایران اپنی فاطمیون ملیشیا میں مقامی لوگوں کو بھرتی کررہا ہے اور دوسری طرف روس الشیخ بریگیڈ میں مقامی لوگوں کو بھرتی کرنے کی مہم جاری رکھے ہوئے ہے۔ جنوری کے بعد سے اب تک ایران نے مغربی فرات کے علاقوں میں 710 افراد کو بھرتی کیا ہے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں