• 425
    Shares

دمشق : اسرائیلی جنگی طیاروں نے حمص کے مشرقی دیہی علاقے میں ٹی فور کے فوجی ہوائی اڈہ کو نشانہ بنایا۔ اس کے نتیجے میں شام میں ایران کی ہمنوا ملیشیاؤں کے ارکان ہلاک اور زخمی ہوگئے۔ ٹی فور کے ہوائی اڈے پر ایرانی ملیشیاؤں کے گودام اور ڈرون طیاروں کا اڈہ موجود ہے۔ جمعہ کے روز شامی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے بتایا کہ اسرائیل نے تنف کے علاقے میں ٹی فور کے فوجی ہوائی اڈے کی سمت حملہ کیا۔ اس کے نتیجے 6 اسدی فوجی زخمی ہو گئے اور مادی نقصان بھی پہنچا۔ ایجنسی نے عسکری ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ اسدی فضائی نظام نے دشمن کے زیادہ تر میزائل مار گرائے۔ شامی مبصر کے مطابق شام کے وسط میں اور مشرق میں زور دار دھماکے سنے گئے جو غالباً اسرائیلی حملوں کے نتیجے میں ہوئے۔ گزشتہ ماہ اسرائیلی وزیر خارجہ یائر لیپید نے اپنے ماسکو کے دورے کے دوران میں کہا تھا کہ ایران کی موجودگی تک شام میں استحکام نہیں آ سکتا۔ اسرائیلی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ اسرائیل شمالی سرحد کے نزدیک ایران کے قدم جمانے کے سامنے ہاتھ باندھ کر نہیں رہے گا۔ شامی اراضی میں اسرائیل سے منسوب فضائی حملوں کے پس منظر میں روس اور اسرائیل کے تعلقات میں تناو دیکھا گیا۔ روس کے نزدیک مذکورہ حملے شامی صدر بشار الاسد کی حکومت کو نشانہ بنانا ہے جو ماسکو کی حمایت یافتہ ہے۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔ 


اپنی رائے یہاں لکھیں