کولکاتا ، 23 فروری(یو این آئی)سی بی آئی کی ٹیم نے ہزاروں کروڑ روپے کے کوئلے کی غیر قانونی کاروبار معاملےمیں وزیرا علیٰ ممتا بنرجی کے بھتیجے و ممبر پارلیمنٹ ابھیشیک بنرجی کے گھر پہنچ کر ان کی اہلیہ روجری بنرجی سے پوچھ تاچھ کررہی ہے۔تاہم سی بی آئی نے الزام عاید کیا ہے کہ روجری بنرجی پوچھ تاچھ میں تعاون نہیں کررہی ہے۔

خیال رہے کہ آج 11.23بجےوزیر اعلیٰ ممتا بنرجی اچانک ابھیشیک بنرجی کی ہیرس اسٹریٹ کی رہائش گاہ پر پہنچیں اور وہاں دس منٹ تک روکیں ۔ممتا بنرجی نے ابھیشیک بنرجی اور ان کی اہلیہ سے ملاقات و بات کی ۔اس کے بعد ان کا قافلہ روانہ ہوگیا۔مگر اس کے محض تین منٹ کے بعد سی بی آئی کی ٹیم ان کے گھر پہنچ گئی۔ذرائع کے مطابق سی بی آئی کے افسران 8 صفحات پر مشتمل سوال کے ساتھ پہنچے ہیں جس میں خواتین افسران بھی شامل ہیں ۔وزیر اعلی نے ابھیشیک بنرجی اور ان کی اہلیہ کو یقین دلایا ہے کہ وہ انہیں کسی پریشانی میں نہیں جانے دیں گے۔ انہوں نے تحقیقات میں تعاون کرنے کا مشورہ بھی دیا ہے۔

ذرائع کے مطابق سی بی آئی ٹیم کوبیشتر سوالوں کا جواب انہوں نے نہیں دیا ہے۔ ڈیڑھ گھنٹے تک جاری رہنے والی تفتیش میں وہ اکثر سی بی آئی کے پوچھے گئے ہر سوال کے جواب میں ایک ہی بات کہتی تھی کہ ’’مجھے نہیں معلوم ، میں نہیں جانتی‘‘۔ اس کا بیان سی بی آئی نے ریکارڈ کیا ہے۔ تفتیشی ٹیم میں شامل عہدیداروں نے بتایا کہ پوچھ گچھ کے پورے سیشن کے پہلے آدھے گھنٹے کے دوران ان سے آسان سوالات پوچھے گئے۔ اس کے بعد اس سے اس کے بینک اکاؤنٹس اور اس کے بیرون ملک میں لین دین سے متعلق سوالات پوچھے گئے ہیں ، جن میں سے بیشتر کے جواب انہوں نے نہیں دیا ہے ۔ بیشتر سوالوں کے جواب میں ابھیشیک کی اہلیہ نے کہا ہے ،’’مجھے نہیں معلوم ، مجھے اس بارے میں کوئی خبر نہیں ہے ، میں اس سلسلے میں کچھ نہیں بول پاؤں گی۔‘‘

سی بی آئی ذرائع نے بتایا ہے کہ اہلکار ان کے جواب سے خوش نہیں ہیں اور انہیں دوبارہ پوچھ گچھ کے لئے نوٹس دیا جاسکتا ہے۔قابل ذکر ہے کہ اتوار کے روز ہی سی بی آئی نے روجیرا کو انکوائری میں شامل ہونے کے لئے نوٹس دیا تھا ، جس کے بعد انہوں نے پیر کو ایک خط لکھا تھا جس میں انہیں منگل کی صبح گیارہ بجے سے سہ پہر تین بجے تک پوچھ گچھ کے لئے دستیاب رہنے کی ہدایت کی تھی۔قابل ذکر ہے کہ ابھیشیک کی اہلیہ پر کوئلہ اسمگلر انوپ مانجھی کے بینکاک اور لندن اکاؤنٹ میں کروڑوں روپے کی منتقلی کا الزام ہے۔