سی اے اے ‘این آر پی کی مخالفت میں ناندیڑکارپوریشن میں قراردادپیش

ناندیڑ:6مارچ ۔(ورق تازہ نیوز)ناندیڑمیونسپل کارپوریشن میں ملک میں نافذ شہریت ترمیمی قانون اور این آر پی کے خلاف قرارداد پرتجویز کانگریس کے 32کارپوریٹرس نے پیش کی ہے ۔آئندہ اجلاس عام میں اس پرتبادلہ خیال کرکے منظوری دی جائے گی ۔مرکزی حکومت نے دستور کی خلاف ورزی کرتے ہوئے شہریت ترمیمی قانون میںترمیم کرکے نافذ کردیا ہے ۔

اس قانون کی کانگریس پارٹی ابتداءسے مخالفت کررہی ہے۔ناندیڑ کارپوریشن میںبرسراقتدار کانگریس پارٹی کے کارپوریٹرس نے بھی اس قانون کی مخالفت کرتے ہوئے تجویز تیار کرکے اسے اجلاس عام میں پیش کیا جائے گا۔

سابقہ ڈپٹی میئر عبدالشمیم عبداللہ و شبانہ بیگم محمدناصرکی پیش کردہ تجویز کی سید شیرعلی ‘مسعوداحمدخان ‘عبدالرشید ‘عبدالحفیظ ‘عبدالغفار ‘ عبدالستار ‘ شمیم بیگم ‘عبداللطیف عبدالمجید ‘سید شعیب سید مظہر حسین ‘رضیہ بیگم بابو خان ‘ عائشہ بیگم شیخ اسلم کھوکے والے ‘ فرحت سلطانہ خورشیدجاگیردار ‘باپوراو گجبھارے ‘ ناگناتھ گڈم ‘ گیتانجلی کاپورے ‘جیوتسنا گوڑبولے ‘ مہیندر پنپلے ‘دیانند واگھمارے ‘دشینت سوناڑے ‘جیوتی کلیانکر ‘راجوکاڑے ‘پرشانت تڑکے ‘عبدالعلیم خان ‘جیوتی کدم ‘ جئے شری پاوڑے ‘دیپالی مورے ‘ پوجاپاوڑے ‘ راجیش ینم ‘ الکاشہانے ‘ کویتا مڑے ان30ارکان نے تائید کی ہے۔ ڈپٹی میئر ستیش دیشمکھ تروڑیکر ‘ہاوس لیڈر رویندرسنگھ گاڑی والے ‘چیرمین پرکاش کور خالصہ اور امیت سنہہ تہرا ‘ان اہم عہدیداروں کے نام اس تجویز میں نہیں ہے ۔