• 425
    Shares

ایک بھارتی خاتون نے الزام لگایا ہے کہ ساڑھی پہننے کی وجہ سے دہلی کے ایک ریستوران میں اُنہیں داخلے کی اجازت نہیں دی گئی۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق یہ واقعہ حال ہی میں دہلی کے ایکولا دہلی نامی ریستوران میں پیش آیا جہاں خاتون کو ریسٹورنٹ کے عملے نے صرف اس وجہ سے ریستوران میں داخل ہونے سے روک دیا کہ خاتون نے ساڑھی پہنی ہوئی تھی۔

ایکولا دہلی نامی ریستوران کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے جس میں ایک خاتون کو ریستوران کے عملے کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔

ویڈیو میں سنا جا سکتا ہے کہ خاتون ریستوران کے عملے سے کہہ رہی ہے کہ مجھے دکھائیں جہاں لکھا ہے کہ ساڑھی پہن کر ریستوران میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ہے۔

خاتون کی درخواست پر، ریستوران کے عملے میں شامل ایک خاتون نے کہا کہ ’میڈم، ہم صرف جدید اور ماڈرن لباس والی خواتین کو ریستوران میں آنے کی اجازت دیتے ہیں اور ساڑھی اُن ملبوسات میں نہیں آتی۔‘

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔