خارکیف، چرنیہیف اور ماریو پول پربمباری سے بڑی تباہی ‘ مزید 3 شہریو ں کی ہلاکت

کیف : روس کے یوکرین کے شہروں خارکیف، چرنیہیف اور ماریو پول پر حملے جاری ہیں جبکہ دارالحکومت کیف میں بھی لڑائی جاری ہے۔یوکرین کے صدارتی ترجمان کے مطابق روس کے حملوں میں وینیسا ائیرپورٹ مکمل تباہ ہو گیا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق یوکرین کے دارالحکومت کیف کے قریبی علاقے ارپن میں روسی افواج کی شیلنگ سے 3 شہری ہلاک ہو گئے اور ایک پل بھی تباہ ہوا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق روسی افواج کی پیشقدمی روکنے کے لیے یوکرین آرمی نے ارپن اور بوجا دریاؤں کے پل تباہ کر دیے جس کے باعث بڑی تعداد میں شہریوں کا ارپن کے علاقے سے انخلا جاری ہے۔ مختلف حکومتوں کی جانب سے جنگ بندی کی کوششیں کی جارہی ہیں جبکہ بعض ممالک نے ثالثی کی بھی پیش کش کی ہے ۔ اسی دورانروسی صدر سے ترک اور فرانسیسی صدور نے ٹیلی فونک گفتگو کی جس میں یوکرین میں جنگ بندی پر زور دیا گیا۔ روسی صدر نے جواب دیا کہ یوکرین کی طرف سے لڑائی بند کرنے پر ہی یوکرین میں فوجی آپریشن رْکے گا، کسی بھی طرح روس اپنے مقاصد حاصل کر کے رہے گا۔جنگ زدہ علاقوں سے شہریوں کا انخلا جاری ہے اور یوکرین پر 24 فروری کے روسی حملے کے بعد سے اب تک 10 لاکھ سے زائد پناہ گزین پولینڈ میں داخل ہو چکے ہیں۔روسی فوج کے حملے کی صورت میں مزاحمت کے لیے یوکرین کے دارالحکومت کیف کی ا ہم شا ہراؤں پر چوکیاں بنا دی گئی ہیں۔