ماسکو، 8 مارچ (یو این آئی) روسی مسلح افواج نے دارالحکومت کیف سمیت یوکرین کے کئی شہروں سے شہریوں کو محفوظ طریقے سے نکالنے کے لیے مقامی وقت کے مطابق صبح 10 بجے سے جنگ بندی کا اعلان کیا ہے۔روسی وزارت دفاع نے منگل کو یہ اطلاع دی۔


وزارت کے ترجمان ایگور کوناشینکوف نے صحافیوں کو بتایاکہ "جنگ بندی آج ماسکو کے وقت کے مطابق صبح 10 بجے شروع ہوئی، اور انسانی ہمدردی کی راہداریوں کو کیف، چرنیہیو، سومی، کھرکیف اور ماریوپول میں کھول دیا گیا۔”
اس سے کچھ دیر پہلے یوکرین کی نائب وزیر اعظم ارینا ویریشچک نے کہا تھا کہ انسانی ہمدردی کی راہداری منگل کو سومی میں کھل جائے گی۔


انہوں نے بتایاکہ "آج ہی سومی شہر کے لیے ایک انسانی راہداری شروع کی جانی چاہیے۔” "اس پر روسی وزارت دفاع کے ساتھ آئی سی آر سی کو ایک خط میں باضابطہ طور پر اتفاق کیا گیا تھا۔ یعنی ریڈ کراس اور ہم دونوں نے ہیومینٹیرین کوریڈور کھولنے پر اتفاق کیا ہے اور ہمارے پاس دستاویزی ثبوت بھی ہیں۔‘‘


میڈیا رپورٹ کے مطابق ہندوستان اور چین کے شہریوں سمیت تمام شہریوں کو سومی سے پولٹاوا پہنچایا جائے گا۔ سومی میں 500 سے زیادہ ہندوستانی طلباء پھنسے ہوئے ہیں۔ روس کی جانب سے سومی میں عارضی جنگ بندی اور انسانی ہمدردی کی بنیاد پر راہداری کے اعلان کے باوجود طلباء کو وہاں سے نہیں نکالا جا سکا۔محترمہ ویریشچک نے صبح 7 بجے (مقامی وقت) پر جنگ بندی کا اعلان کیا تاکہ لوگ انسانی ہمدردی کی راہداری کے ذریعے سومی سے نکل سکیں۔ پہلا گروپ صبح 8 بجے (مقامی وقت کے مطابق) راہداری سے گزرنا شروع کر دے گا۔ انہوں نےبتایاکہ کسی اور راستے پر اتفاق نہیں ہوا۔