جے پور: راجستھان کے باراں شہر میں ایک نوعمر لڑکے کے قتل کے بعد احتیاطا ً شہر میں دفعہ144نافذ کردی گئی جبکہ ایک دن کے لئے باراں میونسپل کونسل علاقہ میں انٹرنیٹ سروس بھی بند کردی گئی ہے۔ پولیس کے مطابق ہفتہ کی شام کو ہوئے نوعمر لڑکے کے قتل کے بعد پوسٹ مارٹم کے دوران رات کو مرنے والے کے کنبہ کے لوگ اور دیگر لوگ مورچری کے سامنے ہی دھرنے پر بیٹھ گئے تھے۔ نصف رات کے بعد پولیس اور انتظامیہ حکام نے کنبہ کے لوگوں کو سمجھا بجھا کر لاش کی آخری رسومات کے لئے راضی کیا۔

 

بتایا جاتا ہے کہ حالات کشیدہ ہیں اور یہی وجہ ہے کہ آج صبح احتیاط کے طورپر شہر میں دفعہ 144نافذ کر کے اضافی پولیس دستہ تعینات کردیا گیا ہے۔ علاوہ ازیں شہر میں 12جولائی کی صبح سویرے تین بجے تک عارضی طورپر انٹرنیٹ سروس بھی بند کردی گئی۔ بہرحال وہاں امن قائم ہے اورکہیں سے کسی گڑبڑی کی اطلاع نہیں ہے۔

 

پولیس نے بتایا کہ قتل معاملے میں کئی مشتبہ افراد سے پوچھ گچھ کی جارہی ہے اور جلد ہی قتل واقعہ کا انکشاف ہونے کی امید ہے۔ خیال رہے کہ زرعی پیداوار کی منڈی کے سامنے شرمک کالونی میں رہنے والے آزاد نامی نوجوان پر ہفتہ کی شام اچانک گولیوں سے حملہ کر دیا گیا تھا جس کی وجہ سے اس کی موت واقع ہو گئی۔