دہلی میں فسادات کے مدنظر ‘افواہوں پردھیان نہ دیں:ناندیڑاور پربھنی پولس کی اپیل

ناندیڑ:27فروری۔(ورق تازہ نیوز)دہلی میںشہریت ترمیمی قانون ‘این آر سی ‘این پی آر کے خلا ف جاری آندولن کے دوران فرقہ فسادات پھوٹ پڑنے کے بعد ناندیڑ پولس نے شہریان سے اپیل کی کہ وہ افواہوں پرقطعی دھیان نہ دیں ۔ پولس نے کہاہے کہ سوشل میڈیا پرعوام کے جذبات کو ٹھیس پہونچانے والے ویڈیوز اور تصاویر شائع ہورہی ہیں جن پر پولس کی کڑی نظر ہے ۔ ایس پی ناندیڑ وجے کمار مگر نے عوام الناس سے اپیل کی کہ وہ افواہ پھیلانے والوں کے بارے میں پولس محکمہ کواطلاع دیں۔ایسی اطلاع بھی ملی ہے کہ کچھ سماج دشمن عناصر نے سوشل میڈیا پر یہ افواہ پھیلادی کہ ناندیڑمیںفساد ہوا ہے ۔چنانچہ ایس پی نے ایسی افواہوں پرقطعی دھیان نہ دینے اور ضلع میں پُرامن ماحول قائم رکھنے کی اپیل کی ۔
٭اسی طرح پربھنی پولس محکمہ رابطہ عامہ (پی آر او) نے بھی اپنے پریس نوٹ میں کہاکہ سی اے اے ‘ این آر سی آندرولن کے دوران راجدھانی دہلی میں فسادات ہوئے ہیں ان فسادات کے تعلق سے پربھنی میں کوئی افواہ نہ پھیلائےں۔ متنازع اور قابل اعتراض ویڈیوز اور تصاویر کو سوشل میڈیا پر اپلوڈ نہ کریں اسی طرح کے پیامات کو بھی سوشل میڈیا پر ایک دوسرے کو روانہ نہ کریں ۔ پربھنی پولیس سوشل میڈیا پر کڑی نظر رکھے ہوئے ہے اورایسا کرنے والوں کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائے گی اگر کوئی قابل اعتراض ویڈیو سوشل میڈیا پر پائی جاتی تو فوری پربھنی پولیس کو فون نمبر 02452- 226244ربط پیدا کریں اس طرح کر نوٹ پی آر و پربھنی محکمہ پولیس نے جاری کیا ہے