BiP Urdu News Groups

نئی دہلی: ملک کی 8 ریاستوں اترپردیش، دہلی، ہریانہ، ہماچل پردیش، مدھیہ پردیش، گجرات، راجستھان اور کیرالہ میں برڈ فلو کے پھیلنے کی تصدیق ہوگئی ہے۔ ریاست ہریانہ کے پنچکولہ کے دو پولٹری فارموں، مدھیہ پردیش کے شیوپوری، راج گڑھ، اگر اور ودیشہ اضلاع میں مہاجر پرندوں، اترپردیش میں کانپور نامیاتی پارک، راجستھان کے پرتاپ گڑھ اور دوسہ اضلاع میں برڈ فلو پھیلنے کے معاملوں کی تصدیق ہوگئی ہے۔مویشی پروری کے محکمہ نے ریاستوں کو بیماری سے بچاؤ کے لئے ضروری رہنما اصول جاری کیے ہیں۔ چھتیس گڑھ کے ضلع بالود میں پولٹری اور پرندوں کو مارنے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ ریاست میں ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے ٹیمیں تشکیل دی گئیں ہیں اور نمونے جانچ کے لئے بھیجے گئے ہیں۔ دلی کی سنجے جھیل میں پہلے بطخوں کے مرنے کی اطلاع ملی تھی۔ نمونے جانچ کے لئے جالندھر بھیجے گئے تھے۔ پارکوں اور جھیل میں مردہ پائے جانے والے کووں اور بطخوں کی جانچ میں برڈ فلو کی تصدیق ہوئی ہے۔پیر کو موصولہ اطلاعات کے مطابق برڈ فلو میں مردہ کوؤں اور بطخوں کے آٹھ نمونوں کی تصدیق ہوئی ہے۔ محکمہ افزائش مویشیان کے مطابق برڈ فلو سنجے جھیل میں مردہ پائی گئی بطخ اور اور میور وہار پارک کے کوؤں میں پایا گیا ہے۔ دہلی حکومت نے دارالحکومت میں برڈ فلو کے خدشے سے 9 جنوری کو مشرقی دہلی کی مرغا منڈی کو دس دن کے لئے بند کردیا تھا اور دارالحکومت میں زندہ پرندوں کی نقل و حرکت پر پابندی عائد کردی تھی۔ وزیر اعلی اروند کجریوال نے کہا ہے کہ دہلی حکومت برڈ فلو سے متعلق تمام ضروری اقدامات کر رہی ہے۔ گھبرانے یا پریشانی کی کوئی بات نہیں ہے۔ مہاراشٹر کے ممبئی، تھانہ، داپولی، پربھنی اور بڑ اضلاع میں مردہ کوے ملے ہیں جن کو جانچ کے لئے لیبارٹری بھجوا دیا گیا ہے۔ ادھر، کیرالہ میں مرغیوں کو تلف کرنے کا آپریشن مکمل کرلیا گیا ہے۔ کیرالہ کے علاوہ، ہریانہ اور ہماچل پردیش میں مرکزی ماہرین کی ایک ٹیم کو تعینات کیا گیا ہے۔ ریاستوں سے برڈ فلو کی روک تھام کے لئے تمام ضروری اقدامات کرنے کی درخواست کی گئی ہے۔ریاست چھتیس گڑھ کے ضلع بالود میں 8جنوری کی رات اور 9 جنوری کی صبح مرغیوں اور جنگلی پرندوں کی غیر معمولی موت کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ ریاست نے ہنگامی صورتحال کے لئے آر آر ٹی ٹیمیں تشکیل دی ہیں اورمخصوص لیبارٹری کو نمونے بھیج دیئے گئے ہیں۔

اپنی رائے یہاں لکھیں