Waraqu E Taza Online
Nanded Urdu News Portal - ناندیڑ اردو نیوز پورٹل

خواجہ غریب نواز ؒ کی شان میں گستاخی کرنے والے چینل کے خلاف مسلم وکلاء نے نوٹس بھیجا

IMG_20190630_195052.JPG

sharif-ajmer1ممبئی 17جون (یو این آئی)گذشتہ کل نیوز18 کے ایک شو میں خواجہ غریب نواز ؒ کی شان میں گستاخی کرنے والے نیوز اینکر اور مینیجنگ ڈائر امیش دیوگن کے خلاف کارروائی کرنے کے لیئے ممبئی کے مسلم وکلاء نیوزبراڈکاسٹرس ایسو سی ایشن میں میں کمپلین داخل کرتے ہوئے لیگل نوٹس بھی بھیجا ہے جس میں مطالبہ کیا گیا ہیکہ خواجہ غریب نواز ؒ کی شان میں گستاخی کرنے والے چینل پر پابندی لگائی جائے نیز اس کے خلاف انکوائری شروع کی جائے کہ آیا اس نے اتنی بڑی شخصیت کی شان میں لائیو پروگرام میں گستاخی کیسے کی اور اس کے پیچھے اس کی منشا ء کیا ہے۔


ایڈوکیٹ افروز صدیقی کی سربراہی میں وکلاء شریف شیخ، متین شیخ، انصار تنبولی، شاہد ندیم، رازق شیخ، ارشد شیخ، عادل شیخ و دیگر نے نیشنل براڈکاسٹرس ایسو سی ایشن میں شکایت درج کرائی ہیکہ 16/6/2020 کو نیوز18 چینل نے اپنے ایک مباحثہ شو میں خواجہ غریب نواز ؒ کی شان میں گستاخی کرتے ہوئے انہیں ”لٹیرا چشتی“ کہا تھا نیز اس پروگرام کی کلپ ابھی بھی یو ٹیوب اور شوشل میڈیا پر موجود ہے لہذ ا چینل اور اینکر کے خلاف پر فوری کارروائی کی جائے اور اس پر پابندی لگائی جائے کیونکہ اس سے قبل کی چینل ایسی گستاخانہ حرکت کرچکا ہے۔


بذریعہ ای میل وکلاء کی جانب سے بھیجی گئی کمپلین میں لکھا ہیکہ خواجہ غریب نواز ؒ کی شخصیت کسی تعریف کی محتاج نہیں ہے، ہر سال ان کی درگاہ پر پرائم منسٹر، چیف منسٹر س اور اپوزیشن لیڈروں کی جانب سے چادر کا نذرانہ پیش کیا جاتا ہے نیز کروڑوں لوگ خواجہ ؒ کی درگاہ پر حاضری دیتے ہیں جس میں تمام مذاہب کے ماننے والے شامل ہیں۔کمپلین میں مزید لکھاہوا ہیکہ نیوز چینل کی اس گستاخی کے خلاف ملک کے مختلف پولس اسٹیشنوں میں تعزیرا ت ہند کی دفعات 295A, 153A, 34 کے تحت ایف آئی آر درج کرانے کا سلسلہ جاری ہے لیکن جیسا کہ ٹی وی نیوز چینلز کے معاملات براڈکاسٹرس ایسو سی ایشن دیکھتا ہے لہذ ا نیوز 18 کی سروسیس کو عارضی طورپر معطل کرے اور اس کارروائی کرے۔


کمپلین نوٹس میں مزید لکھا ہیکہ ٹی آرپی بڑھانے کی ہوڑ میں خواجہ غریب نوازؒ کی شان میں گستاخی کرنا نا قابل قبول ہے کیونکہ اس کی وجہ سے مسلمانوں اور خواجہ ؒ کے چاہونے والوں کے جذبات مجروح ہوئے ہیں۔
واضح رہے کہ ممبئی سمیت پورے ملک میں نیوز اینکر امیش دیوگن کیخلاف ایف آئی آر درج کرائی جارہی ہے جس میں گنجا ن مسلم آبادی والا شہر مالیگاؤں بھی شامل ہے جہاں ایف آئی آر درج کی جاچکی ہے۔