• 425
    Shares

پاکستان حکومت نے دسویں اور بارہویں جماعت کے تمام طلبہ کو پاس کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ فیل ہونے والے طلبہ کو رعایتی 33 نمبرز دے کر پاس کیا جائے گا۔وفاقی وزارت تعلیم کے ذرائع نے اردو نیوز کو بتایا کہ رعایتی نمبرز صرف فیل ہونے والے طلبہ کو ملیں گے۔ باقی میرٹ برقرار رہے گا

پیر کو وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدارت ہونے والی بین الصوبائی وزراء تعلیم کانفرنس میں فیصلہ کیا گیا کہ کورونا صورتحال کے باعث دوبارہ فوری امتحانات ممکن نہیں۔ میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات سال میں دو دفعہ ہوں گے۔امتحانات کو سپلیمنٹری امتحانات کا نام نہیں دیا جائے گا۔

وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے پیر کو اپنی ٹوئٹ میں لکھا کہ ’بین الصوبائی وزراء تعلیم کانفرنس میں اہم فیصلے ہوئے۔ بورڈ کے امتحانات مئی جون میں ہوں گے اور اگلا تعلیمی سال 22 اگست سے شروع ہو گا جبکہ او اور اے لیول کے امتحانات شیڈول کے مطابق ہوں گے۔‘فیصلے کے مطابق یونیورسٹیاں اپنے امتحانات کا ٹائم ٹیبل خود بنائیں گی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ رعایتی نمبرز صرف فیل ہونے والے طلبہ کو ملیں گے۔ باقی میرٹ برقرار رہے گا۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔