ممبئی 9 مئی (یو این آئی)آج علی الصبح قومی تفشیشی ایجنسی (این آئی اے) کی درجنوں ٹیموں نے ممبئی میں مافیا سرغنہ داؤد ابراہیم کے قریبی ساتھیوں اور کچھ حوالہ آپریٹروں کے ٹھکانوں پر چھاپے مارے پر متعدد مقامات سے گرفتاریاں بھی کی ہیں۔ذرائع کے مطابق گرفتار شدہ ریاستی وزیر نواب ملک کے قریبی اور معروف حاجی علی اور مخدوم شاہ درگاہوں کے چیف ٹرسٹی امین کھنڈوانی کو بھی این آئی اے نے حراست میں لیاہے،بتایا جاتا ہے کہ۔سن سے تفتیش جاری ہے۔

ذرائع کے مطابق اس دوران مرکزی ایجنسی نے داؤدابراہیم کی ممبئی میں جائدادوں کی دیکھ بھال کرنے والے سلیم قریشی عرف سلیم فروٹ نامی شخص کو حراست میں لیا ہےاور اسکے قبضے سے چند دستاویزات بھی برآمد کی ہیں، جو داود کی بے نامی جائیدادوں کے تعلق سے بتلائی جاتی ہے.

اترپردیش کے بریلی شریف سے تعلق رکھنے سلیم قریشی سے اس سے قبل ای ڈی نے بھی پوچھ تاچھ کی تھی ۔
ذرائع کے مطابق مرکزی ایجنسی کے افسران فی الوقت جنوبی ممبئی کے مسلم اکثریتی علاقوں ناگپاڑہ ، بھنڈی بازار اور مضافاتی علاقوں گوریگاؤں، بوریولی اور سانتا کروز علاقوں کے متعدد ٹھکانوں پر چھاپے مار رہے ہیں۔جس ی وجہ سے کھلبلی مچ گئی ہے۔

واضح رہے کہ ماہم میں واقع حضرت مخدوم مائمی اور مشہور حاجی علی درگاہ کے منیجنگ ٹرسٹی سہیل کھنڈوانی کو بھی حراست میں لیاہے۔اس کارروائی میں حوالہ آپریٹرز بھی شامل ہیں۔ جبکہ منشیات فروشوں اور دیگر حوالے والوں کے خلاف کارروائیاں کی جارہی ہیں۔ذرائع کاکہناہے کہ سہیل کھنڈوانی کے آڑ میں دراصل نواب ملک مبینہ طور پر نشانہ پر ہیں،کیونکہ دونوں تجارت میں ساجھیدار ہیں جبکہ۔تعلیمی۔ادرے بھی چلاتے ہیں۔