جیل میں بند ڈاکٹر کفیل کا پی ایم مودی کو خط، بتایا کورونا وائرس اسٹیج-3 سے لڑنے کا طریقہ

متھرا۔اس وقت متھرا جیل میں بند ڈاکٹر کفیل خان نے پی ایم مودی کو ایک خط لکھا ہے جس میں کورونا وائرس کے بڑھتے خطرات سے نمٹنے کے لیے ایک روڈ میپ پیش کیا ہے۔ کفیل خان نے کورونا وائرس کے پیش نظر حکومت کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے لکھا ہے کہ اس وائرس کے تیسرے مرحلہ میں پہنچنے کا اندیشہ ہے اور اس سے بچنے کے لیے بہت منظم طریقے سے کام کرنا ہوگا۔

متھرا جیل انتظامیہ کے ذریعہ بھیجے گئے خط میں ڈاکٹر کفیل نے ہندوستان کی ہیلتھ سروسز کی کمزوریوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ اگر ملک کورونا کے تیسرے اسٹیج میں پہنچتا ہے تو وہ جنوبی کوریا کی طرح بہتر صحت خدمات اور منصوبہ بند طریقے سے اس بحران سے باہر نہیں نکل پائے گا۔ ایسے میں ہمیں جو کچھ کرنا ہے، وہ اسی وقت کیا جانا چاہیے، ورنہ حالات بے قابو ہونے میں دیر نہیں لگے گی۔ڈاکٹر کفیل نے خط میں لکھا ہے کہ "مجھے کووِڈ-19/سارس-کوو-2 سے لڑنے کے لیے حکومت کے ذریعہ اختیار کی گئی ترکیبیں قابل تعریف اور اطمینان بخش لگی ہیں۔ لیکن ہندوستان اس کے تیسرے مرحلہ میں پہنچ سکتا ہے۔ اندیشہ ہے کہ ایسا ہونے پر ملک کے تیس سے چالیس لاکھ شہری متاثر ہو سکتے ہیں۔

♨️Join Our Whatsapp 🪀 Group For Latest News on WhatsApp 🪀 ➡️Click here to Join♨️

اس حالت میں تین سے چار فیصد مریضوں کی موت ہو سکتی ہے۔ ایسے میں یہ وبا بہت ہی دھماکہ خیز صورت اختیار کر سکتی ہے۔” ڈاکٹر کفیل نے ہندوستان کے مختلف علاقوں میں لگائے گئے 107 مفت صحت کیمپ میں 50 ہزار مریضوں کو دیکھے جانے کا حوالہ دیتے ہوئے خط میں لکھا ہے کہ "ہمارا پرائمری ہیلتھ سروس پوری طرح سے چرمرایا ہوا ہے۔ ڈاکٹروں اور نرسوں کی بہت کمی ہے۔ 50 فیصد سے زیادہ بچے عدم غذائیت کے شکار ہیں۔ آئی سی یو صرف شہروں تک محدود ہیں۔ لوگوں میں بیداری کی کمی کے سبب یہ وبا بہت خطرناک ثابت ہو سکتی ہے۔ ایسے میں صحت خدمات کو ابھی سے مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔

WARAQU-E-TAZA ONLINE

I am Editor of Urdu Daily Waraqu-E-Taza Nanded Maharashtra Having Experience of more than 20 years in journalism and news reporting. You can contact me via e-mail waraquetazadaily@yahoo.co.in or use facebook button to follow me