رانچی ، 16 اکتوبر (یو این آئی) جھارکھنڈ حکومت کے سیاحت اور کھیلوں کے وزیر حفیظ الحسن انصاری نے سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ کو جیتے جی خراج عقیدت پیش کیا ، جو ایمس میں زیر علاج ہیں۔وزیر حسن نے ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ کی موت کی خبر کا حوالہ دیتے ہوئے خراج عقیدت پیش کیا۔اپوزیشن پارٹی، بی جے پی نے اس پر شدید رد عمل کا اظہار کیا ہے ۔

سابق مرکزی وزیر اور بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ جینت سنہا نے کہا کہ ایک طرف پورا ملک سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ کی جلد صحتیاب ہونے کی دعا کر رہا ہے اور اسپتال انتظامیہ کے مطابق ان کی صحت میں بھی بہتری ہو رہی ہے ، دوسری طرف کانگریس اتحاد والی جھارکھنڈحکومت کے وزیر ہی منموہن سنگھ کی موت پر اظہار تعزیت کر رہے ہیں، یہ بدقستمی ہے۔ بی جے پی کے ریاستی صدر اور راجیہ سبھا رکن دیپک پرکاش اور سابق وزیر اور رکن اسمبلی سی پی سنگھ نے بھی وزیر حفیظ الحسن سے اس غیر مہذب بیان پر معافی مانگنے کا مطالبہ کیا ہے۔

مسٹر حسن کی ایک ویڈیو وائرل ہو رہی ہے جس میں وہ ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہہ رہے ہیں کہ ایک افسوسناک خبر ہے ، سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ کا انتقال ہو گیا ہے۔ ہندوستان کو آگے لے جانے میں منموہن سنگھ نے اہم کردار ادا کیا ہے۔ آج آپ ہندوستان میں جو ترقی دیکھ رہے ہیں اس میں منموہن سنگھ جی کا بڑا حصہ ہے۔ آخر میں ، وزیر نے مرحوم کی روح کے سکون کے لیے ایک منٹ کی خاموشی بھی اختیار کی۔ وزیر کا یہ بیان سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہا ہے اور انہیں ٹرول کیا جا رہا ہے۔ واضح رہے کہ اس سے پہلے بھی جھارکھنڈ حکومت کی سابق وزیر تعلیم اور بی جے پی رہنما ڈاکٹر نیرا یادو نے سابق صدر اے پی جے عبدالکلام کو زندہ رہتے ہوئے خراج عقیدت پیش کیا تھا ، جس کے بعد انہوں نے بلا تاخیر کے معافی بھی مانگ لی تھی۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔