جلگاؤں:شادی کی خوشیاں ماتم میں تبدیل’سڑک حادثے میں دلہے کی ماں کی دردناک موت و پانچ افراد شدید زخمی

7

جلگاؤں( سعید پٹیل)آج جمعرات صبح دس بجے کے قریب شادی کی خوشیاں ماتم میں بدل گئ ہیں۔سڑک حادثے میں دلہے کی ماں کی اس حادثے میں دردناک موت ہوگئ۔جبکہ دیگر پانچ افراد شدید زخمی ہوۓ ہیں۔ساودا۔امودا ریاستی شاہراہ پر ہوۓ دلخراش حادثے میں بھاونا بھرت سوپے( ٤٨) کی موت واقع ہوگئ۔موصولہ اطلاعات کے مطانق گھر میں شادی کا ماحول ہونے سے پورے خاندان میں خوشگواری کی بہار اس وقت اچانک ماتم میں بدل گئ۔بھاونا بھرت سوپے ان کے بڑے بٹیے کی حال ہی میں شادی ہوئی۔اسی شادی کی ٥ دسمبر کو استقبالیہ تقریب سودا میں منعقد ہونے والی تھی۔جس کی وجہ سے خریداری کےلیئے سوپے خاندان جلگاؤں جارہاتھا۔ڈرائیوروں کے اوہرٹیک کرتے وقت توازن بگڑ جانے سے تیز رفتار فارچونر۔اور انڈیکا کےدرمیان ٹکر ہونے کی وجہ سے دلخراش حادثہ پیش آیا۔ساودا پیمپرول شاہراہ پر امودا۔بھیکن گاؤں ہائی بریڈ سڑک پر تیز رفتارکاروں کی اوہرٹیک کرتے وقت زبردست ٹکر ہوگئ۔٤٨ سالا بھاونا بھرت سوپے اپنے رشتہ داروں کے ساتھ شادی تقریب کی خریداری کرنے جلگاؤں جارہی تھیں۔تیز رفتار انڈیکا نے فارچونر کو زبردست ٹکر ماری۔جس میں دولہے کی ماں بھاونا بھرت سوپے کی
موت ہونے اور دیگر پانچ افراد شدید زخمی ہونے سے شادی کی خوشیاں ماتم میں بدل گئ۔میت خاتون پنچایت سمیتی کے سابق نائب صدر بھرت سوپے ان کی بیوی تھیں۔اس طرح جلگاؤں ضلع بھر میں گذشتہ ہفتہ بھر سے روزانہ ضلع کے کسی نہ کسی مقام پر سڑک پر حادثہ ہونے سے عوام کے لیئے لمحہ فکر بن گی ہیں۔
دوسرے حادثے میں گذشتہ روز ریلوے سفر بند ہونے سے روزانہ آنا جانا کرنے والے ڈونگر گاؤں (تعلقہ پاچورا) کے مزدوروں کی کروزر چالیس گاؤں تعلقہ کے ھیرا پور گاؤں کے پاس حادثے کا شکار ہوگئ۔مزدوروں کو لیجارہی کروزر گاڑی پلٹ جانے کے حادثے میں تین افراد ہلاک جبکہ دس افراد زخمی ہوۓ اور آٹھ افراد کو معمولی چونٹیں آئی۔
اسی طرح پاچورا۔بھڑگاؤں کے درمیان دو آئیشر لاریوں میں مخالف سمت میں ٹکرانے سے ہوۓ حادثے میں لاری ڈرائیور جاۓ حادثے پر ہی ہلاک ہوگیا۔جبکہ دو افراد شدید زخمی ہوۓ ہیں۔یہ حادثہ بامروڈ ( مہادیو کا) کے پاس تیتور ندی کے پل کے پاس ہوا۔