جئے شری رام‘ کا نعرہ نہیں لگانے پرمسلم نوجوان کے ساتھ مارپیٹ،حیدرآباد کا واقعہ

951

حیدرآباد۔ :(ایجنسیز)جمعرات کی رات دیر گئے چارمینا ر علاقے میں اس وقت کشیدگی جب شر پسندوں نے پرانے شہر میں بونال جلوس کے دوران ایک مسلم نوجوان کے ساتھ ”جئے شری رام“ کا نعرہ نہیں لگانے پر مارپیٹ کی تھی۔مشکلات کھڑی کرنے والے ان شرپسندوں کی پولیس نے شناخت کرلی اور انہیں اپنی تحویل میں لے لیاہے۔ تفصیلات کے مطابق حسینی علم کے ایک ساکن محمد شاہد عرف افریدی جمعرات کی رات اپنے گھر واپس لوٹ رہے تھے‘ درایں اثناء حسینی علم شاد کیفے کے پاس ایک بونال جلوس گذررہا تھا۔

اچانک شرپسندوں کے ایک گروپ نے مبینہ طورپر شاہد کو روکا اور اس کے سر پر تلک لگادیا اور جئے شری رام کے نعرے لگانے پر انہیں مجبور کیا‘ جب اس نوجوان نے انکار کیاتو بے رحمی کے ساتھ اس کی پیٹا ئی کردی گئی۔واقعہ کے بعد علاقے میں کشیدگی پھیل گئی۔شاہد نے اس ضمن میں چار مینار پولیس میں ایک شکایت کی جس کی بنیاد پر ایک مقدمہ درج کرلیاگیا۔پولیس نے روپیش شرما کی حیثیت سے واقعہ کے کلیدی ملزم کی شناخت کی ہے اور تفتیش کے لئے ایک پولیس ٹاسک فورس کی تشکیل عمل میں لائی ہے۔اس معاملے کی جانچ پولیس کررہی ہے۔