تھانے مونسپل کارپوریشن کا دوہرا رخ، انسانوں کیلئے ٹیکہ کی قلت اور کتوں کے ٹیکہ کے لیے کروڑوں کا مسودہ پیش
اپوزیشن لیڈر اشرف پٹھان (شانو) نے کیا سنسنی خیز خلاصہ
تھانے(آفتاب شیخ)تھانے مونسپل کارپوریشن دوہرے رخ کا استعمال کررہی ہے ایک طرف شہریوں کے لئے کورونا ٹیکہ کی قلت بتا رہی ہے تو وہیں شہر کے کتوں کے لئے کروڑوں روپئے کے ٹیکہ لگانے کا مسودہ اسٹینڈنگ کمیٹی میں پیش کرنے کے اسے منظوری دینے جارہی ۔اسطرح کا سنسنی خیز خلاصہ ٹی ایم سی کے اپوزیشن لیڈر اشرف پٹھان (شانو) نے کیا ہے ۔ اُنھوں نے ایک پرہس کانفرنس میں بتایا کہ ٹی ایم سی ریاستی سرکار کا اپنے مطلب کا جی آر قبول کرلیتی ہے اور جو اسکے مزاج میں نہیں بیٹھتا اسے نافذ کرنے سے کتراتی ہے

تھانے مونسپل کارپوریشن میں این سی پی کے اپوزیشن لیڈر اشرف پٹھان نے بتایا کہ ریاستی سرکار کا 6 مئی کو ایک جی آرآیا کہ کورونا کے متعلق سبھی کارپوریشن اپنے تئیں فیصلہ لے سکتی ہیں انھیں ریاستی سرکار کے فیصلہ پر کورونا و ان کے یہاں کے حالات کے چلتے فیصلہ لینے کا اختیار ہے ایسے میں تھانے مونسپل کارپوریشن کتوں کو ویکسین لگانے کے فیصلہ کو واپس کیوں نہیں لیتی کیوں کہ ابھی تک ہمارے شہر میں شہریوں کو ہی پوری طرح سے ویکسین لگا نہیں ہے شانو پٹھان نے مزید بتایا کہ اسٹینڈ نگ کمیٹی کا اجلاس جو شہر اور شہریوں کے مسائل پرمبنی ہوتا ہے اسے سبھا گرہ ہال میں لینے نہیں دیا جارہا اس پر کورونا کا قانون نافذ کیا جارہا ہے اسی طرح ماہانا اجلاس عام جس میں کارپوریٹروں کے کئی مسائل ہیں انھیں ویبیمنار سے باہر نہیں نکلنے دے رہے اس پر ریاست کے کورونا ایکٹ کی دوہائی دیتے ہیں لیکن البتہ کتوں کو ویکسین ضروری ہے ان کے نزدیک اس سلسلہ میں اشرف پٹھان نے مونسپل کمشنر وپن شرما سے بھی ملاقات کی اور انھیں بتایا کہ اس منصوبہ پر فوری روک لگائی جائے اور شہریو ں کے ویکسین کی راہ ہموار کی جائے اور اسٹینڈنگ و اجلاس کو وسیع و عریض ہال میں منعقد کیا جائے۔