ترکی کی معاشی مدد کیلئے سعودی عرب ترک مرکزی بینک میں پانچ ارب ڈالر جمع کروانے کو تیار

173

سعودی عرب کی وزارت خزانہ کے ترجمان کی جانب سے منگل کو جاری کیے گئے بیان کے مطابق سعودی عرب کی جانب سے پانچ ارب ڈالر ترکی کے مرکزی بینک میں جمع کروانے کے لیے دونوں ممالک میں بات چیت جاری ہے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کی طرف سے سعودی وزارت خزانہ کے ترجمان کو بھیجی گئی ایک ای میل کے جواب میں ترجمان کا کہنا تھا کہ ’ترکی کے مرکزی بینک میں پانچ ارب ڈالر کے ڈیپازٹ کے لیے ہم حتمی مذاکرات کر رہے ہیں۔‘

دوسری جانب ترکی کے سینٹرل بینک نے اس معاملے پر بات کرنے سے انکار کر دیا ہے۔

تاہم معاملے سے باخبر ایک ترک اہلکار کا کہنا ہے کہ رقم جمع کروانے کے لیے معاہدے پر بات چیت آخری مرحلے میں ہے۔

لیرا کی قیمت میں کمی اور 85 فیصد سے زیادہ افراط زر کی وجہ سے ترکی کی معیشت بری طرح دباؤ کا شکار ہے۔

ایسی صورت حال میں رقم جمع کروانے کے معاہدے سے ترکی کے کم ہو جانے والے زر مبادلہ کے ذخائر میں اضافے میں مدد مل سکتی ہے۔

تجزیہ کاروں کے مطابق سعودی ڈیپازٹ سے جون میں انتخابات سے قبل ترکی کے صدر رجب طیب اردوغان کو اپنے لیے عوامی حمایت میں اضافہ کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔