Waraqu E Taza Online
Nanded Urdu News Portal - ناندیڑ اردو نیوز پورٹل

تبلیغی جماعت کے تعلق سے وزارت صحت کااہم بیان

IMG_20190630_195052.JPG

نئی دہلی، 4اپریل (یو این آئی) ملک میں کورونا وائرس کووڈ۔19کے مجموعی طورپر 2902متاثرین میں سے تقریباََ 30فیصد یعنی 1023معاملات دہلی کے نظام الدین مرکز میں تبلیغی جماعت میں شامل ہوئے لوگوں سے وابستہ ہیں۔وزارت صحت کے جوائنٹ سکریٹری لو اگروال نے سنیچر کو یہاں نامہ نگاروں کو بتایا کہ تبلیغی جماعت میں شامل ہوئے لوگوں سے منسلک کورونا وائرس کے 1023معاملات ملک کی 17ریاستوں اور مرکز کے زیرانتظام ریاستوں میں پائے گئے ہیں۔ ان ریاستوں میں دہلی، مہاراشٹر، جموں وکشمیر، آسام، آندھراپردیش، تملناڈو، کرناٹک، کیرالہ تلنگانہ، اترپردیش، جھارکھنڈ، ہماچل پردیش، اتراکھنڈ، ہریانہ، انڈمان و نکوبار، راجستھان اور اروناچل پردیش شامل ہیں۔

ان ریاستوں میں دہلی، مہاراشٹر، جموں وکشمیر، آسام، آندھراپردیش، تملناڈو، کرناٹک، کیرالہ تلنگانہ، اترپردیش، جھارکھنڈ، ہماچل پردیش، اتراکھنڈ، ہریانہ، انڈمان و نکوبار، راجستھان اور اروناچل پردیش شامل ہیں۔وزارت داخلہ کی ترجمان للیتا سریواستو نے بتایا کہ تبلیغی جماعت میں شامل لوگ اور ان کے رابطہ میں آئے تقریباََ 22ہزار لوگوں کا پتہ لگاکر انہیں کورینٹائن کیا گیا ہے۔

مسٹر اگروال نے بتایا کہ کورونا وائرس سے 2902متاثرین میں صفر سے 20برس کے 9فیصد، 21سے چالیس برس تک کے 42فیصد، 41سے 60برس تک کے 33 فیصد اور 60برس سے زیادہ کے 17فیصد لوگ ہیں۔ مجموعی متاثرین میں سے 58معاملات سنگین ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ ملک میں کورونا وائرس کے انفیکشن کے دوگنا ہونے کی شرح دوسرے ممالک کے مقابلہ میں کافی کم ہے اور ایسا حکومت کے سرگرم، مرحلہ وار اور خطرے کے اندیشہ کا اندازہ لگاتے ہوئے پہلے سے کئے گئے اقدامات کی وجہ سے ممکن ہوا ہے۔