بے مثال اداکاردلیپ کمار اور کامنی کوشل کے عشق کی داستان کتابی شکل میں منظرعام پر

ممبئی،12مارچ(یواین آئی )شہنشاہ جذبات دلیپ کماراور اپنے زمانہ کی معروف اداکارہ کامنی کوشل کے موضوع بحث بننے والے عشق کی داستان کو اب کتابی شکل میں منظرعام پر لایا گیا ہے،اسے کتابی شکل میں ترینتراباجپائی اور انشولا باجپائی نے ”دلیپ کمار :بے مثال فن کاراور متاثرکن نسلیں“کے عنوان سے ڈھالنے کی کوشش کی ہے ،کامنی کوشل ’شہید‘،شبنم ،اور ندیا کے پار‘ میں دلیپ کمار کے مدمقابل ہیروئین تھیں اور پہلی بار میں انہیں عشق ہوگیا اور دونوں طرف عشق کا شعلہ بھڑکا ہواتھا،جبکہ کتاب میں اس بات کا بھی ذکر ہے کہ مدھوبالا کا بعد کے دورمیں دلیپ اور پریم ناتھ کے ساتھ معاشقہ ساتھ ساتھ چلتا رہا۔

مذکورہ میں واضح طورپر اظہار کیا گیا ہے کہ حالانکہ دلیپ کمار نے کامنی کوشل کے ساتھ عشق کے بارے میں کبھی بھی کھل کراظہار نہیں کیا،لیکن کتاب میں جگہ جگہ ہم عصروں کا اشارہ دیا گیا ہے ،جوکہ دونوں کے مابین عشق کی دہائی دیتے ہیں۔کتاب کے مطابق مشہورکتھک رقاصہ ستارا دیوی نے دعویٰ کیا تھا کہ انہوں نے ممبئی ایک عالیشان ہوٹل میں افواہوں کا شکار اس جوڑے سے ملاقات کی تھی ،جوکہ فرصت کے لمحات گزاررہے تھے۔

♨️Join Our Whatsapp 🪀 Group For Latest News on WhatsApp 🪀 ➡️Click here to Join♨️

دلیپ کمار معاشقہ کے بارے میں شائع ہونے والی اس کتاب میں فلم ساز اور ہدایت کار پی این اروڑہ نے کامنی کوشل کوسپرہٹ فلم پگری میں ہدایت دی تھی ،بتایا کہ دلیپ کمار وقفہ وقفہ سے فلم کے سیٹ پرکامنی کوشل سے ملاقات کے لیے آدھمکتے تھے ،اروڑہ کے حوالے سے مطلع کیا گیا ہے کہ کامنی کوشل کے فوجی بھائی پستول لیکر فلم کے سیٹ پرپہنچ گیا اور کامنی کوشل کو جان سے مارنے کی دھمکی دی کہ وہ دلیپ کمار سے دوررہیں۔کتاب کے مطابق کامنی کوشل کے بھائی نے دلیپ کمار کو بھی دھمکی دی تھی۔بتایا جاتا ہے کہ اردوادیبہ عصمت چغتائی نے بھی دلیپ کمار کو اس معاشقہ کے بارے میں متنبہ کیا تھا۔جس کے خطرناک نتائج سامنے آسکتے تھے۔
مذکورہ کتاب کے مضمون پر یقین کیا جائے تو اس کے مطابق دلیپ کمار اور کامنی کوشل کے معاشقہ کوختم کرنے میں ناکامی کے بعدان کے بھائی نے خودکو گولی مار کر خودکشی کرلی تھی ۔دونوں فنکاروں کے معاشقہ کے خاتمہ کی ایک وجہ کامنی کوشل کے بھائی کی خودکشی کو بھی بتایا جاتا ہے ۔ویسے کامنی کوشل کی شادی ان کی بری بہن کے انتقال کے بعد ان کے بہنوئی سے پنجابی رواج کے مطابق کردی گئی تھی ۔

WARAQU-E-TAZA ONLINE

I am Editor of Urdu Daily Waraqu-E-Taza Nanded Maharashtra Having Experience of more than 20 years in journalism and news reporting. You can contact me via e-mail waraquetazadaily@yahoo.co.in or use facebook button to follow me