نئی دہلی:10۔مارچ(ورق تازہ نیوز) اترپردیش کے اسمبلی انتخابات میں پارٹی بدلنے والے کئی سابق لیڈران کو بری طرح شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ سوامی پرساد موریہ، جو تقریباً پانچ سال تک یوپی حکومت میں کابینہ وزیر رہے، کو فاضل نگر سیٹ سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ وہیں ان کی طرح پسماندہ طبقات سے ناانصافی کا مطالبہ کرتے ہوئے بی جے پی چھوڑنے والے لیڈر دارا سنگھ چوہان بھی گھوسی سیٹ سے پیچھے ہیں۔

وہاں سے بی جے پی کے وجے کمار راج بھر آگے ہیں۔ راج بھر کو اب تک 50247 اور دارا سنگھ چوہان کو 52080 ووٹ ملے ہیں۔ یہاں بی ایس پی تیسرے نمبر پر ہے۔ سوامی پرساد موریہ کو فاضل نگر سیٹ سے 29647 ووٹ ملے۔ وہیں بی جے پی کے سریندر کمار کشواہا کو 55913 ووٹ ملے اور وہ بڑے فرق سے جیت گئے۔ سوامی پرساد اپنی پدرونا سیٹ چھوڑ کر یہاں الیکشن لڑنے آئے تھے۔ وہیں دھرم سنگھ سینی بھی سماج وادی پارٹی میں شامل ہو کر نکوڈ سیٹ سے الیکشن لڑ رہے تھے اور وہ بھی بی جے پی کے مکیش چودھری کے مقابلے میں پیچھے ہیں۔ حالانکہ ووٹوں کا فرق صرف 50 ووٹوں کا ہے۔