بی جے پی حکومت بننے کے بعد اپنے حلقہ میں ایک بھی مسجد نہیں رہنے دوں گا: پرویش ورما

وزیر داخلہ امت شاہ، انوراگ ٹھاکر اور بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ پرویش ورما دہلی اسمبلی انتخابات جیتنے کے لئے کسی بھی حد تک جانے کے لئے تیار ہیں اور اب اس کے لئے وہ شاہین باغ کے نام پر دہلی میں فرقہ وارانہ منافرت پھیلانے کی ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔ پہلے امت شاہ کا بیان کہ بٹن بابرپور(اسمبلی حلقہ کا نام) میں دباؤ اور اس کا کرنٹ شاہین باغ تک پہنچنا چاہیے، پھر انوراگ ٹھاکر کا نعرہ ’دیش کے غداروں کو، گولی مارو… کو‘ اور اب دہلی کے رکن پارلیمنٹ اور دہلی کےسابق وزیر اعلی صاحب سنگھ ورما (مرحوم) کے بیٹے پرویش ورما نے کہا ہے کہ دہلی میں بی جے پی کی سرکار بنتے ہی شاہین باغ کے مظاہرین کو ایک گھنٹے میں ہٹوا دیں گے۔

پرویش ورما نے وکاس پوری اسمبلی حلقہ کے رنہولا گاؤں میں ایک انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ واضح رہے جنوبی دہلی کے شاہین باغ علاقہ میں شہریت ترمیمی قانون کے خلاف خواتین مظاہرہ کر رہی ہیں اور ان کو مظاہرہ کرتے ہوئے ایک ماہ سے زیادہ ہو گیا ہے۔ اس مظاہرہ کے تعلق سے ہی وزیر داخلہ امت شاہ نے بیان دیا اور اسی کے تعلق سے پرویش ورما نے کہا ’’ایک بات نوٹ کر کے رکھ لینا۔ یہ چناؤ کوئی چھوٹا موٹا چناؤ نہیں ہے۔ یہ ملک کی عزت اور اتحاد کا چناؤ ہے۔ اگر 11 فروری کو بی جے پی کو اکثریت حاصل ہو گئی تو ایک گھنٹے کے اندر شاہین باغ میں کوئی بھی مظاہرین نہیں رہے گا، شاہین باغ کا مظاہرہ ختم ہو جائے گا، وہاں ایک آدمی دکھائی نہیں دے گا، ایک سنگل آدمی بھی نہیں دکھائی دے گا۔‘‘ انہوں نے شاہین باغ کے پر امن مظاہرین کے خلاف نازیبا الفاظ بھی استعمال کیے۔

پرویش ورما نے مزید کہا کہ ’’وہاں (شاہین باغ) پر لاکھوں لوگ جمع ہوتے ہیں۔ دہلی کے عوام کو سوچنا پڑے گا اور فیصلہ لینا پڑے گا۔ وہ آپ کے گھروں میں گھس جائیں گے، آپ کی بہن، بیٹیوں کی عزت لوٹیں گے، قتل کریں گے۔ آج وقت ہے، مودی جی اور امت شاہ جی کل آپ کو بچانے نہیں آئیں گے۔‘‘ بی جے پی کے ہر رکن کی کوشش ہے کہ دہلی کے عوام گرتی معیشت، بے روزگاری اور امن و امان کی صورتحال پر بات نہ کریں، بلکہ ان کو ہندو مسلم میں الجھا کر رکھا جائے۔


مسلمانوں کے خلاف اپنی نفرت میں پرویش ورما یہیں نہیں رکے بلکہ انہوں نے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ ’’میں آپ سے وعدہ کرتا ہوں کہ اگر دہلی میں بی جے پی کی حکومت بنتی ہے تو میں حکومت بننے کے ایک ماہ کے اندر اپنے پارلیمانی حلقہ میں سرکاری زمین پر بنی ایک بھی مسجد نہیں رہنے دوں گا، ساری مساجد ہٹا دوں گا۔ ہم ملک کو کیا بناتے جا رہے ہیں؟‘‘


یہ ایک سینڈیکیٹیڈ فیڈ ہے ادارہ نے اس میں کوئی ترمیم نہیں کی ہے. – بشکریہ قومی آواز بیورو

HAJJ ASIAN

WARAQU-E-TAZA ONLINE

I am Editor of Urdu Daily Waraqu-E-Taza Nanded Maharashtra Having Experience of more than 20 years in journalism and news reporting. You can contact me via e-mail waraquetazadaily@yahoo.co.in or use facebook button to follow me

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔