کلکتہ۔مذکورہ بی جے پی نے مغربی بنگال میں منگل کے روز مجوزہ اٹھ مراحل کے اسمبلی انتخابات کے لئے اپنی آخری فہرست کی اجرائی عمل میں لائی جس میں جملہ 13نئے نام شامل کئے گئے ہیں۔

تعجب کی بات تو یہ ہے کہ حال ہی میں بھگوا خیمہ میں داخلہ لینے والے بالی ووڈ سوپر اسٹار متھن چکربرتی کا نام نئے امیدواروں کی فہرست میں شامل نہیں ہے‘ جس نے بدقسمتی سے ہنگامی صورتحال والے ان اسمبلی انتخابات میں بنگال کے پسندیدہ ’دادا‘ کے مقابلہ کرنے کی تمام قیاس آرائیوں کو ختم کردیاہے۔

متھن نے 7مارچ کے روز کلکتہ کے برگیڈ میدان میں ہونے والی بی جے پی کی سب سے بڑی ریالی کے دوران پارٹی میں شمولیت اختیار کی تھی‘ جب انہوں نے وزیراعظم نریندر مودی اور بی جے پی کے کئی سینئر قائدین کے ساتھ شہہ نشین شیئر کیاتھا۔

بی جے پی میں شمولیت کے دوسرے ہی دن مذکورہ اداکارہ نے کلکتہ کے بالگیچا حلقہ سے بطور رائے دہندہ خود کااندراج کرایاتھا اپنے رشتہ کے بھائی کے پتہ لکھایاتھا۔

اس سے قبل وہ ممبئی میں ووٹر کی حیثیت سے رجسٹرار تھے۔ مذکورہ بی جے پی نے کلکتہ کی رس بیہاری حلقہ سے ریٹائرڈ لفٹنٹ جنرل سوبراتا سہا کو اپنا امیدوار بنایاہے جبکہ سابق چیف معاشی مشیر اشوک لاہیری کو بالور گھاٹ کے ساوتھ دنجا پور سے اپنا امیدوار بنایا ہے‘

لاہیری کو سابق میں نارتھ بنگال میں علی پورداور سے امیدوار بنایاگیاتھا مگر پارٹی کے ایک حصہ کی جانب سے اس امیدواری کے خلاف شدید احتجاج کے بعد انہیں وہاں سے تبدیل کردیاگیا ہے۔


اپنی رائے یہاں لکھیں