پورنیہ 11 اپریل ( یواین آئی ) بہا رکے کشن گنج نگر تھانہ صدر اشونی کمار کی موت کا صدمہ ان کی ماں برداشت نہیں کر پائی اور آج انہوں نے بھی دم توڑ دیا ، اب دونوں کی ارتھی ایک ساتھ اٹھے گی ۔مسٹر کمار چوری کی گئی موٹر سائیکل کی برآمدگی اور ملزم کی گرفتاری کیلئے سنیچر علی الصباح سرحدی ریاست مغربی بنگال میں گوال پوکھر تھانہ علاقہ کے پنت پاڑا گاﺅں میں چھاپے ماری کرنے گئے تھے ، جہاں گاﺅں والوں نے پیٹ ۔ پیٹ کر ان کا قتل کر دیا تھا۔امراض قلب میں مبتلا ان کی ماں کو یہ خبر نہیں دی گئی تھی ۔

ذرائع نے بتایاکہ جیسے ہی پولیس انسپکٹر اشونی کمار کی جسد خاکی پورنہ ضلع کے جانکی پورتھانہ علاقہ کے پانچو منڈل ٹولہ واقع ان کے آبائی گاﺅں پہنچی تو کہرام مچ گیا ۔
کافی کوششوںکے بعد بھی ان کی ماں ارمیلا دیو ی کو پتہ چل ہی گیا اور وہ اس صدمے کو پرداشت نہیں کر پائیں۔ آخر کار ان کی ماں کا بھی انتقال ہوگیا ۔ شہید مسٹر کمار اور ان کی ماں کی آج قریب دو بجے گاﺅں میں ہی آخری رسومات ادا کی جائے گی ۔

شہید کے والد مہیشوری پرساد کا سات سال قبل ہی انتقال ہوگیا تھا۔ گذشتہ تین ۔ چار سالوں سے مسٹر اشونی کمار کا پورا کنبہ پٹنہ کے ہنومان نگر میں کرائے کے مکان میں رہتا ہے ۔ انہیں تین بچے ہیں۔ پٹنہ میں ان کی اہلیہ مینو سنیہہ لتا، پندرہ سال کی بڑی بیٹی نوسی اور دو جڑواںبیٹا ۔ بیٹی گریس اور ونش ( عمر قریب چھ سال)رہتا ہے ۔

مسٹر کمار چوری کی گئی موٹر سائیکل کی برآمدگی اور ملزم کی گرفتاری کیلئے سنیچر علی الصباح سرحدی ریاست مغربی بنگال میں گوال پوکھر تھانہ علاقہ کے پنت پاڑا گاﺅں میں چھاپے ماری کرنے گئے تھے ، جہاں گاﺅں والوں نے پیٹ ۔ پیٹ کر ان کا قتل کر دیا تھا۔امراض قلب میں مبتلا ان کی ماں کو یہ خبر نہیں دی گئی تھی ۔

ذرائع نے بتایاکہ جیسے ہی پولیس انسپکٹر اشونی کمار کی جسد خاکی پورنہ ضلع کے جانکی پورتھانہ علاقہ کے پانچو منڈل ٹولہ واقع ان کے آبائی گاﺅں پہنچی تو کہرام مچ گیا ۔
کافی کوششوںکے بعد بھی ان کی ماں ارمیلا دیو ی کو پتہ چل ہی گیا اور وہ اس صدمے کو پرداشت نہیں کر پائیں۔ آخر کار ان کی ماں کا بھی انتقال ہوگیا ۔ شہید مسٹر کمار اور ان کی ماں کی آج قریب دو بجے گاﺅں میں ہی آخری رسومات ادا کی جائے گی ۔

شہید کے والد مہیشوری پرساد کا سات سال قبل ہی انتقال ہوگیا تھا۔ گذشتہ تین ۔ چار سالوں سے مسٹر اشونی کمار کا پورا کنبہ پٹنہ کے ہنومان نگر میں کرائے کے مکان میں رہتا ہے ۔ انہیں تین بچے ہیں۔ پٹنہ میں ان کی اہلیہ مینو سنیہہ لتا، پندرہ سال کی بڑی بیٹی نوسی اور دو جڑواںبیٹا ۔ بیٹی گریس اور ونش ( عمر قریب چھ سال)رہتا ہے ۔