ریاض : سعودی عرب کے وزیر حج وعمرہ ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے بیرون سعودی عرب سے اب کسی ایجنٹ کی مدد کے بغیر عمرے کی الیکٹرانک درخواست دینے کی سہولت کا افتتاح کیا ہے۔اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے کہا کہ اس عمرہ کا ویزہ صرف 24 گھنٹوں میں جاری ہوا کرے گا۔انہوں نے بتایا کہ شہزادہ محمد بن سلمان کی 2030 وڑن کا ایک اہم ہدف زیادہ سے زیادہ معتمرین کے خیر مقدم کے لیے سہولیات پیدا کرنا بھی ہے۔ڈاکٹر توفیق الربیعہ کے بقول اس سال حج کے سیزن میں دنیا بھر سے دس لاکھ فرزندان توحید حج کی سعادت حاصل کریں گے۔ ہماری کوشش ہو گی کہ ان تمام کی صحت کو یقینی بنایا جائے۔انہوں نے بتایا کہ حج سمارٹ کارڈ کا اجرا اسی سال ہو گا۔ ڈیجیٹل ٹکنالوجی حج کو مثالی انداز میں منظم کرنے میں سہولت پیدا کرتی ہے۔ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے حج اسمارٹ کارڈ کے حوالے سے وضاحت کرتے ہوئے مزید کہا کہ مجوزہ اسمارٹ کارڈ سے مشاعر مقدسہ ، منی ، عرفات اور مزدلفہ میں اپنے مقامات پر پہنچنے میں کافی سہولت ہو گی۔ حجاج کی خدمت کے حوالے سے ’نسک‘ پروگرام پرعمل جاری ہے جس کا بنیادی مقصد ضیوف الرحمان کو فراہم کی جانے والی سہولتوں میں اضافہ کرنا ہے۔پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر حج نے ڈیجیٹل عمرہ سرویسز کے حوالے سے مزید کہا بیرون مملکت سے آنے والے عمرہ زائربراہ راست تمام امور کا انتخاب کر سکیں گے جن میں مکہ مکرمہ میں ہوٹلوں کی بکنگ کے علاوہ ٹرانسپورٹ سرویسز کی خدمات بھی شامل ہوں گی۔