بہار میں موب لنچنگ کے واقعات میں کوئی کمی دیکھنے کو مل رہی ہے۔ تازہ معاملہ ریاست کے گیا ضلع واقع ڈوبھی تھانہ حلقہ میں ایک ذہنی طور پر معذور شخص کو لوگوں نے چور سمجھ لیا اور پھر ایسی پٹائی کی کہ وہ موت کی نیند سو گیا۔ اس معاملے میں پولس نے اب تک تین لوگوں کو گرفتار کیا ہے اور پورے معاملے کی جانچ چل رہی ہے۔ پولس کے مطابق گروا تھانہ واقع جگن ناتھ پور گاؤں کے دیپک کمار (19 سال) اپنے پھوپھا کے گھر ڈوبھی ڈویژن کے لیمبوگڑھا گاؤں باشندہ شنکر پاسوان کے گھر پر کچھ دن سے رہ رہا تھا۔

بتایا جاتا ہے کہ شنکر پاسوان بدھ کی صبح اپنے گھر کے لیے پیدل ہی نکل گیا اور ڈوبھی تھانہ کے کیشاپی گاؤں پہنچ گیا۔ الزام ہے کہ یہاں کے لوگوں نے اسے چور سمجھ کر خوب پٹائی کی، جس سے وہ سنگین طور سے زخمی ہو گیا۔ ڈوبھی کے تھانہ انچارج راہل رنجن نے جمعرات کو بتایا کہ ذہنی طور سے کمزور دیپک کو فوراً مقامی اسپتال لے جایا جا رہا تھا کہ راستے میں اس کی موت ہو گئی۔

راہل رنجن نے بتایا کہ مہلوک کے پھوپھا کے بیان کی بنیاد پر ڈوبھی تھانہ میں اس معاملے کی ایک ایف آئی آر درج کرائی گئی ہے، جس میں 9 لوگوں کو نامزد ملزم بنایا گیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ تین لوگوں کو پولس نے گرفتار کر لیا ہے اور دیگر ملزمین کی گرفتاری کے لیے چھاپہ ماری کی جا رہی ہے۔