بہار: دھونی کی تصویر کا استعمال کر کے 5 کروڑ سے زیادہ کی ٹھگی، 5 گرفتار

178

پٹنہ: ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان مہندر سنگھ دھونی کی تصویر کا استعمال کر کے 5 کروڑ روپے سے زائد کی دھوکہ دہی کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ پولیس نے اس معاملے میں 5 لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ ایک پولیس اہلکار نے منگل کو بتایا کہ کچھ لوگوں نے قرض دینے کے نام پر دھونی فائنانس کے نام سے ایک فرضی کمپنی کھولی اور ملک بھر میں لوگوں کو کروڑوں روپے کا دھوکہ دیا۔ اس کمپنی کے لوگو پر کرکٹر دھونی کی تصویر لگائی گئی تھی۔

پولیس کے مطابق ملزمان پروسیسنگ کے نام پر 50 ہزار روپے تک وصول کر لیتے تھے۔ ان کے پاس بہت سے لوگوں کے نام، پتے اور فون نمبر ملے ہیں، جنہیں آسان اقساط پر قرض فراہم کرنے کا جھانسہ دیا گیا۔ پٹنہ کے پترکار نگر تھانے کی پولیس نے اتوار کی شام اس گینگ کے 5 ارکان کو گرفتار کر لیا۔

ایک اہلکار نے بتایا کہ پہلے دو ٹھگ گوتم کمار (نالندہ) اور بھرت کمار (نالندہ) کو کنکر باغ جنوبی گولمبر کے قریب واقع ایک گلی سے مشتبہ حالت میں گرفتار کیا گیا۔ اس کے بعد ان کی اطلاع پر پولیس کھیامنی چک میں ٹھگوں کے دفتر پہنچی جہاں سے مزید 3 ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا، جن کے نام آکاش کمار سنہا (نالندہ)، راجیو رنجن (باربیگاہ، شیخ پورہ) اور آکاش کمار (مالسلامی، پٹنہ) ہیں۔آکاش سنہا اور آکاش کمار دھوکہ دہی کے معاملے میں پہلے بھی جیل جا چکے ہیں۔ پٹنہ کے سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس ڈاکٹر منوجیت سنگھ ڈھلوں نے بتایا کہ یہ گینگ پرسنل لون، ہوم لون، بزنس لون، انشورنس اور جی ایس ٹی کے نام پر لوگوں کو دھوکہ دیتا تھا۔ ملزمان نے دو کمروں کا فلیٹ لے کر دفتر کھول رکھا تھا۔ پولیس نے ملزمان سے 1.45 لاکھ روپے نقد، لیپ ٹاپ، مہندر سنگھ دھونی کی تصویر، رجسٹر، 10 موبائل فون، بائک اور 30 ​​اے ٹی ایم کارڈ برآمد کئے ہیں۔