بھوپال : بھوپال اور اندور میں کل رات سے نائٹ کرفیو لگایا جارہا ہے ۔ آج بھوپال میں وزیر اعلی شیوراج سنگھ کی صدارت میں ہوئی جائزہ میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا گیا ۔ کافی دنوں کی جدوجہد کے بعد کورونا کے حالات کو دیکھتے ہوئے سرکار نے یہ فیصلہ کیا ہے ۔ اسی کے ساتھ مہاراشٹر سے مدھیہ پردیش آنے والوں کی تھرمل اسکریننگ جاری رہے گی ۔ ان لوگوں کو ایک ہفتہ آئیسولیشن میں بھی رہنا ہوگا ۔

کورونا وائرس کے حالات کو لے کر بھوپال میں وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ کی موجودگی میں ہوئی جائزہ میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا گیا ۔ کل یعنی 17 مارچ بدھ رات سے بھوپال اور اندور میں نائٹ کرفیو لاگو کیا جائے گا ۔ مہاراشٹر میں کورونا کے حالات تشویشناک ہونے کی وجہ سے وہاں سے مدھیہ پردیش آنے والے لوگوں کی تھرمل سکریننگ جاری رہے گی ۔ ایسے سبھی لوگوں کو احتیاط کے طور پر ایک ہفتہ آئیسولیشن میں رہنا ہوگا ۔نائٹ کرفیو رات 10 بجے سے صبح چھ بجے تک لاگو رہے گا ۔ آج ہوئی میٹنگ میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ اگر بھوپال اور اندور میں مریض کم نہیں ہوئے تو دونوں شہروں میں ایک دن کا مکمل لاک ڈاؤن بھی لگایا جاسکتا ہے

آٹھ شہروں میں بازار رات 10 بجے کے بعد بند
مدھیہ پردیش کے آٹھ شہروں جبل پور ، گوالیار ، اجین ، رتلام ، چھندواڑہ ، برہانپور ، بیتول اور کھرگون میں رات 10 بجے کے بعد بازار بند رہیں گے ۔ ان شہروں میں کرفیو جیسے حالات نہیں رہیں گے ، لیکن بازار کو لازمی طور پر بند کرنا ہوگا ۔ یہ حکم بھی کل 17 مارچ سے لاگو ہوگا ۔
گجرات کے چار شہروں میں بھی نائٹ کرفیو
بتادیں کہ گجرات حکومت کی جانب سے بھی احمد آباد ، راجکوٹ ، وڈودرہ اور سورت میں 17 مارچ سے 31 مارچ تک کیلئے نائٹ کرفیو لاگو کیا گیا ہے ۔ وہیں ریاستی حکومت کا کہنا ہے کہ 16 مارچ یعنی منگل کی رات 12 بجے ( سوموار دیر رات ) سے صبح چھ بجے پری نائٹ کرفیو رکھا گیا ۔ وہیں اس کے بعد 17 مارچ سے نائٹ کرفیو کا وقت رات 10 بجے سے صبح 6 بجے تک کا ہوگا ۔ سرکار نے یہ قدم گزشہ کچھ دنوں سے گجرات میں بڑھ رہے کورونا معاملات کے پیش نظر اٹھایا ہے